Saturday , November 17 2018
Home / ہندوستان / میجر کے والد کی درخواست پر مرکز اور جموں و کشمیر حکومت کو نوٹس

میجر کے والد کی درخواست پر مرکز اور جموں و کشمیر حکومت کو نوٹس

نئی دہلی، 12 فروری (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے جموں کشمیر کے شوپیاں میں حالیہ فائرنگ کیس میں میجر آدتیہ کمار کے خلاف پولیس کارروائی پر اگلی سماعت تک کے لئے روک لگا دی ہے ۔چیف جسٹس دیپک مشرا کی قیادت والی بینچ نے وکیل ایشوریہ بھاٹی کی جانب سے دائر عرضی پر آج سماعت کرتے ہوئے 10 گڑھوال رائفل کے میجر کمار کے خلاف پولیس کارروائی پر اگلی سماعت تک روک لگاتے ہوئے مرکز اور جموں و کشمیر حکومت کو نوٹس بھی جاری کیا اور دو ہفتے میں جواب دینے کے لئے کہا ہے ۔درخواست دہندہ کا کہنا ہے کہ شوپیان میں فائرنگ کے واقعے میں میجر کمار کے خلاف درج ایف آئی آر غیر قانونی ہے ۔ اس معاملے کو خارج کرنے کی درخواست کرتے ہوئے میجر کمار کے والد لیفٹیننٹ کرنل کرمویر سنگھ (ریٹائرڈ) نے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایا ہے ۔ میجر کے والد نے درخواست میں کہا کہ ان کے بیٹے کو غلط طریقے سے ایف آئی آر میں نامزد کیا گیا ہے ۔فوج پر ایف آئی آر کے سلسلے میں جموں و کشمیر میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کا رخ مختلف ہے اور یہ دیکھنا دلچسپ رہے گا کہ مرکز اور ریاستی حکومت نوٹس کا کیا جواب دیتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT