میٹروریل کے پہلے مرحلہ کواہم منظوری

کمشنر میٹرو ریل سیفٹی اور ریلوے سیفٹی کمیشن ٹیم کی رضامندی
حیدرآباد ۔ 20نومبر ( سیاست نیوز) حیدرآباد میٹرو ریل کے 30کلومیٹر پر مشتمل پہلے مرحلہ کا عنقریب آغاز ہونے جارہا ہے ‘ جبکہ کمشنر میٹرو ریل سیفٹی نے اس پراجکٹ کو منظوری دے دی ہے ۔ میٹرو ریل پراجکٹ جملہ 72کلومیٹر کی مسافت پر مشتمل ہے اور ایل اینڈ ٹی میٹرو ریل حیدرآباد نے اسے تعمیر کیا ہے ۔ کمپنی کے عہدیداروں نے کہا کہ کمشنر میٹرو ریل سیفٹی رام کرپال اور ریلوے سیفٹی کمیشن کی ٹیم نے 17نومبر سے مسلسل تین دن سارے پراجکٹ کا تفصیلی معائنہ کیا ۔ انہوں نے سیول کاموں ‘ ریلوے ٹریک ‘ اسٹیشنس ‘ روڈ اوور برج ‘ پُل‘ الکٹریکل ‘ ٹیلی کمیونکیشن ‘ سگنل اور ٹرین کنٹرول کے علاوہ دیگر سسٹمس کا مشاہدہ کیا ہے ۔ انہوں نے تجرباتی طور پر ٹرین کی رفتارکی بھی جانچ کی ۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ مختلف سسٹمس کا جائزہ لینے کے بعد کمشنر میٹرو ریل سیفٹی نے مٹوگوڑہ کا ایس آر نگر براہ امیر پیٹ انٹرچینج میٹرو اسٹیشن ( 30کلومیٹر پٹی ) کیلئے اجازت نامہ جاری کردیا ۔ ایل اینڈ ٹی میٹرو ریل حیدرآباد کے منیجنگ ڈائرکٹر اور سی ای او شیوآنند نمبرگی نے بتایا کہ اس اجازت نامہ کے بعد ناگول تا میاں پور براہ امیر پیٹ انٹرچینج میٹرو اسٹیشن میٹرو ٹرین چلانے کا موقع فراہم ہوگیا ۔ ناگول تا مٹوگوڑہ مرحلہ ۔1 اور میاں پور تا ایس آر نگرمرحلہ۔2کیلئے کمشنر میٹرو ریل سیفٹی کی منظوری پہلے ہی حاصل کی جاچکی ہے ۔

 

TOPPOPULARRECENT