Wednesday , May 23 2018
Home / سیاسیات / میگھالیہ میں کانگریس حکومت کے قیام کی اُمید برقرار

میگھالیہ میں کانگریس حکومت کے قیام کی اُمید برقرار

پارٹی کی حکمت عملی کے انکشاف سے چیف منسٹر سنگما کا گریز
شیلانگ ۔ 3 مارچ ۔( سیاست ڈاٹ کام ) میگھالیہ کے چیف منسٹر مکل سنگما نے آج کہاکہ انتخابی نتائج متوقع خطوط پر برآمد نہیں ہوئے لیکن ریاست میں وہ کانگریس حکومت تشکیل دینے کی کوششیں بدستور جاری رکھیں گے ۔ سنگما کے یہ تبصرے ایک ایسے وقت منظرعام پر آئے جب ووٹوں کی گنتی کے دستیاب رجحانات سے پتہ چلتا ہے کہ میگھالیہ میں ایک معلق اسمبلی تشکیل پائی گئی ۔ اس سوال پر کہ میگھالیہ میں وہ دوبارہ حکومت تشکیل دیں گے ۔ سنگما نے جواب دیا کہ فی الحال وہ اپنی پارٹی کے منصوبوں کا انکشاف نہیں کریں گے ۔ انھوں نے کہاکہ ’’میں تمام امکانات کاجائزہ لیتے ہوئے حکومت تشکیل دینے پر غور کروں گا ‘‘ ۔ 60 رکنی اسمبلی میں کانگریس کو 20 نشستیں ملی ہیں اور ایک نشست پر سبقت ہے ۔ بی جے پی کو دو حلقوں میں سبقت حاصل ہے اور اس کی حلیف این پی پی تین حلقوں میں کامیاب ہوچکی ہے اور اس کو 16حلقوں میں سبقت حاصل ہے ۔ میگھالیہ میں کانگریس 2003 ء سے برسراقتدار ہے اور مکل سنگما 2010ء سے چیف منسٹر کے عہدہ پر فائز ہیں۔ منی پور اور گوا میں گزشتہ سال منعقدہ انتخابات میں معلق اسمبلیاں تشکیل پائی تھیں اور بی جے پی ان دونوں ریاستوں میں حکومت تشکیل دی تھی ۔ ایسی ہی صورتحال کو محسوس کرتے ہوئے یہ پارٹی (بی جے پی ) اب آسام کے چیف منسٹر ہیمنتا بسواس کو میگھالیہ روانہ کرچکی ہے اور کانگریس بھی اپنے سینئر لیڈرس احمد پٹیل اور کمل ناتھ کو شیلانگ روانہ کرچکی ہے ۔

 

TOPPOPULARRECENT