Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / میں کے سی آر سے خوفزدہ نہیں: چندرا بابو نائیڈو

میں کے سی آر سے خوفزدہ نہیں: چندرا بابو نائیڈو

میرا ذاتی مفاد نہیں، عوام کی خدمت اولین مقصد، چیف منسٹر آندھرا پردیش کا خطاب

حیدرآباد۔/8جون، ( پی ٹی آئی) چیف منسٹر آندھرا پردیش این چندرا بابو نائیڈو نے آج کہا کہ وہ اپنے تلنگانہ کے ہم منصب کے چندر شیکھر راؤ سے خوفزدہ نہیں ہیں، میں کسی سے بھی نہیں ڈرتا، کے سی آر میرے پرانے رفقاء میں سے ایک ہیں، کیا مجھے ان سے ڈرنا چاہیئے۔؟ انہوں نے یہاں پر منعقدہ ایک جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے حاضرین سے استفسار کیا کہ بھائیو آپ مجھے بتائیں آیا مجھے کے سی آر سے ڈرنا چاہیئے۔ مہا سنکلپم پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے چندرا بابو نائیڈو نے اپوزیشن لیڈر وائی ایس جگن موہن ریڈی کا حوالہ دیا جو بار بار یہ کہہ رہے ہیں کہ چندرا بابو نائیڈو کے سی آر سے خائف ہیں کیونکہ دونوں ریاستوں کے درمیان مختلف متنازعہ مسائل پر چندرا بابو نائیڈو نے خاموشی اختیار کرلی ہے۔ ان کی خاموشی ظاہر کرتی ہے کہ وہ کے سی آر سے خوفزدہ ہیں۔ نائیڈو نے جواب دیا کہ میں کوئی مفاد پرست نہیں ہوں، عوام کی بہبود ہی میری اولین ترجیح ہے، میں کسی سے نہیں ڈرتا۔ جن لوگوں کے خلاف رشوت کے الزامات ہیں وہی ڈرتے ہیں۔چندرا بابو نائیڈو نے جگن کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ رشوت کے الزام میں یہ لوگ مقدمات کا سامنا کررہے ہیں اور ان پر درجنوں فوجداری مقدمات ہیں۔ستیم کمپیوٹرس کے مالک وجئے رام لنگا راجو اور وجئے مالیا جیسے لوگ  قانون سے فرار نہیں ہوسکتے۔ جگن کو بھی اسی طرح کی صورتحال کا سامنا کرنا پڑیگا۔ چیف منسٹر آندھرا پردیش نے اپوزیشن لیڈر پر شدید تنقید کی اور کہا کہ جگن موہن ریڈی ریاست آندھرا پردیش کی ترقی میں رکاوٹیں پیدا کرنے کی کوشش کررہے ہیں اور ہر قدم پر وہ رکاوٹ بنے ہوئے ہیں۔ آندھرا پردیش کے نئے دارالحکومت کا معاملہ ہو یا دریاؤں کو دوبارہ مربوط کرنے کا مسئلہ ہو اس طرح کی سرگرمیوں میں وہ حاء ہونے کی کوشش کررہے ہیں۔ چندرا بابونائیڈو نے اپنی ریاست میں تلگودیشم حکومت کی جانب سے گذشتہ دو سال کے دوران کئے گئے مختلف پروگراموں کا حوالہ دیا اور کہا کہ 24ہزار کروڑ کی اسکیم کے ذریعہ کسانوں کی بہبود کے کام کئے گئے ہیں جس کی نظیر نہیں ملتی۔ ان کی ریاست سے غربت کا خاتمہ کرنے اور ہر خاندان میں خوشحالی لانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT