مے ویدر سے ڈبلیو بی او کی بیلٹ واپس لے لی گئی

واشنگٹن ، 7 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) پانچ بار کے ورلڈ چمپئن اور معروف امریکی باکسر فلائڈ مے ویدر سے فلپائن کے مینی پیکیاؤ کو شکست دینے کے بعد جیتی گئی ورلڈ باکسنگ چمپئن شپ کی بیلٹ واپس لے لی گئی ہے۔ 38 سالہ مے ویدر کے پاس 3 جولائی تک کا وقت تھا، جس میں انھیں ورلڈ باکسنگ آرگنائزیشن کی دو لاکھ ڈالر کی منظوری کی رقم ادا کرنا تھی جسے وہ وقت پر

واشنگٹن ، 7 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) پانچ بار کے ورلڈ چمپئن اور معروف امریکی باکسر فلائڈ مے ویدر سے فلپائن کے مینی پیکیاؤ کو شکست دینے کے بعد جیتی گئی ورلڈ باکسنگ چمپئن شپ کی بیلٹ واپس لے لی گئی ہے۔ 38 سالہ مے ویدر کے پاس 3 جولائی تک کا وقت تھا، جس میں انھیں ورلڈ باکسنگ آرگنائزیشن کی دو لاکھ ڈالر کی منظوری کی رقم ادا کرنا تھی جسے وہ وقت پر نہ دے سکے۔ مے ویدر سے امید کی جا رہی تھی کہ وہ ورلڈ باکسنگ آرگنائزیشن کا ٹائٹل چھوڑ دیں گے۔ انھوں نے مینی پیکیاؤ سے جیت کے بعد اس بات کا اعلان بھی کیا تھا۔ اس مقابلے کو دنیا کا سب سے مہنگا مقابلہ کہا گیا اور اس نے 40 کروڑ ڈالر سے زیادہ کا بزنس کیا تھا۔ مے ویدر سے لی گئی بیلٹ اب ان کے ہم وطن ٹِموتھی بریڈلی کو دے دی جائے گی۔ مے ویدر نے مینی پیکیاؤ سے جیت کے بعد کہا تھا کہ وہ اپنے تمام جیتے ہوئے ٹائٹل رضاکارانہ طور پر نئے آنے والے باکسروں کیلئے چھوڑ دیں گے تاکہ انھیں موقع مل سکے۔ ورلڈ باکسنگ چمپئن شپ کی ویب سائٹ پرجاری کئے گئے بیان میں لکھا گیا تھا کہ ’’ورلڈ باکسنگ چمپئن شپ کمیٹی کے پاس اور کوئی چارہ نہیں ہے سوائے اس کے کہ وہ مے ویدر جونیئر سے ڈبلیو بی او ویلٹر ویٹ چمپئن کا اعزاز واپس لے لے‘‘۔ مے ویدر جن کے پاس ڈبلیو بی اے اور ڈبلیو بی سی کے ویلٹر ویٹ ڈویژن کے اعزازات موجود ہیں، ان کے پاس اس فیصلے کے خلاف اپیل کرنے کیلئے 20 جولائی تک وقت ہے۔ امید ہے کہ مے ویدر ریٹائرمنٹ سے پہلے ایک آخری میچ 12 ستمبر کو کھیلیں گے۔ انھوں نے ابھی تک اس میچ کیلئے اپنے حریف کا اعلان نہیں کیا۔ تاہم برطانوی نژاد پاکستانی باکسر عامر خان ان سے مقابلے کے خواہش مند ہیں۔

TOPPOPULARRECENT