Saturday , September 22 2018
Home / دنیا / نائیجیریا میں مغویہ لڑکیوں کی غیر مشروط رہائی کا مطالبہ

نائیجیریا میں مغویہ لڑکیوں کی غیر مشروط رہائی کا مطالبہ

ابوجا 15 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) نائیجیریا میں مغویہ 200 اسکولی لڑکیوں کے رشتہ داروں اور سرپرستوں نے ان کی غیر مشروط رہائی کا مطالبہ کیا ہے ۔ نائیجیریا کی حکومت نے لڑکیوں کے بدلے تخریب کاروں کی رہائی کے مطالبہ کو مسترد کردیا ہے ۔ بوکو حرم کی جانب سے ان لڑکیوں کو اغوا کیا گیا ہے ۔ بوکو حرم کے لیڈر ابوبکر شیخو نے ایک ویڈیو میں جاریہ ہفتے یہ ا

ابوجا 15 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) نائیجیریا میں مغویہ 200 اسکولی لڑکیوں کے رشتہ داروں اور سرپرستوں نے ان کی غیر مشروط رہائی کا مطالبہ کیا ہے ۔ نائیجیریا کی حکومت نے لڑکیوں کے بدلے تخریب کاروں کی رہائی کے مطالبہ کو مسترد کردیا ہے ۔ بوکو حرم کی جانب سے ان لڑکیوں کو اغوا کیا گیا ہے ۔ بوکو حرم کے لیڈر ابوبکر شیخو نے ایک ویڈیو میں جاریہ ہفتے یہ اشارہ دیا تھا کہ نائیجیریا کی جیلوں میں جو تخریب کار عسکریت پسند محروس ہیں ان کے بدلے ایک ماہ قبل اغوا کی گئی 223 لڑکیوں کو رہا کیا جاسکتا ہے ۔ تاہم برطانیہ کے افریقی وزیر مارک سائمنڈس نے صدر گڈلک جوناتھن سے چہارشنبہ کو ملاقات کے بعد کہا تھا کہ صدر مملکت نائیجریا اس بار پر اٹل ہیں کہ ایسیا کوئی بات چیت نہیں ہوسکتی جس میں قیدیوں کی ادلا بدلی کی بات ہو ۔ ایک مغویہ لڑکی کے رشتہ دار ایوبہ چیبوک نے کہا کہ لڑکیوں کے اغوا سے ان کے والدین متاثر ہو رہے ہیں ۔ ان کے افراد خاندان بھی ان نوجوان لڑکیوں کے تعلق سے فکرمند ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ ان لڑکیوں کو کسی شرط یا مذاکرات کے بغیر رہا کیا جائے ۔

اگر بوکو حرم حکومت سے کوئی مطالبہ کرنا چاہتی ہے تو انہوں کوئی اور بات کرنی چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ جہاں تک لڑکیوں کی رہائی کا مطالبہ ہے بوکو حرم کے قائد کو چاہئے کہ انہیں کسی شرط کے بغیر رہا کریں۔ یہ ادعا کیا جارہا ہے کہ ان لڑکیوں کو غلاموں کی حیثیت سے فروخت بھی کیا جاسکتا ہے ۔ ان اطلاعات کے بعد عالمی سطح پر برہمی کا اظہار کیا گیا ہے اور بین الاقوامی برادری نے اس بحران کے حل میں نائیجیریا کی مدد کا تیقن دیا ہے ۔ یہاں اغوا کے واقعہ کے بعد سے امریکی ڈرون طیارے اور پائلٹ والے نگران کار طیارے بھی متعین کئے گئے ہیں۔ پنٹگان نے یہ بات بتائی ۔ اس دوران برطانیہ کی جانب سے ایک جاسوس طیارہ بھی روانہ کیا جارہا ہے جو وہاں پہلے سے موجود فرانسیسی اور اسرائیلی ماہرین کے ساتھ کام کریگا ۔ پارلیمنٹ میں سینیٹرس نے سکیوریٹی اور فوجی کمانڈرس سے بھی اس تعلق سے تبادلہ خیال کیا ہے ۔ پارلیمنٹ میں صدر گڈ لک جوناتھن نے خواہش کی ہے کہ تین شمال مشرقی ریاستوں میں ایمرجنسی کی مدت میں تین ماہ کی مزید توسیع کی جائے ۔

TOPPOPULARRECENT