Sunday , November 19 2017
Home / دنیا / ناسا کے مسلم انجینئر کو ایئرپورٹ پر روک لیا گیا

ناسا کے مسلم انجینئر کو ایئرپورٹ پر روک لیا گیا

ہوسٹن ۔ 14 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) ایک ہندوستانی نژاد مسلم ناسا سائنسداں کے بیان کے مطابق اسے ہوسٹن کے جارج بش انٹرکانٹی نینٹل ایرپورٹ پر روک لیا گیا اور کسٹم عہدیداروں نے اس کے ’’پن پروٹکٹیڈ ورک فون‘‘ کو کھولنے کی ہدایت کی۔ 35 سالہ سعیدانور نے سوشیل میڈیا پر تحریرکیا کہ امریکی کسٹم اور بارڈر پروٹکشن آفیسرس نے اس سے نہ صرف اس کا سیل فون طلب کیا بلکہ پاسورڈ بھی مانگا۔ ہوم لینڈ سیکوریٹی نے دیگر مسافروں کے ساتھ انہیں بھی دھر لیا جو دراصل امریکہ میں مسلمانوں کی آمد پر امتناع کے تحت کی جانے والی کارروائی کا حصہ تھا۔ سعیدانور نے اپنی فیس بک پوسٹ میں یہ تفصیلات بتائیں۔ انہوں نے کہاکہ ابتداء میں انہوں نے فون دینے سے انکار کیا کیونکہ یہ ناسا کی طرف سے تفویض کیا گیا انتہائی خفیہ نوعیت کا فون تھا اور میں نہیں چاہتا تھا کہ کسی بھی دیگر فرد کی اس فون کے ڈیٹا تک رسائی ہو۔  انہوں نے کہا کہ وہ امریکہ میں پیدا ہوئے ہیں اور امریکی شہری ہیں تاہم ان کی خاندانی جڑیں ہندوستان سے مربوط ہیں۔ وہ ناسا کے انجینئر ہیں اور ان کے پاس کارکرد امریکی پاسپورٹ تھا۔ بہرحال فون اور پن حاصل کرنے کے بعد کسٹم افسران نے انہیں اس وقت تک روکے رکھا جب تک انہوں نے فون میں موجود ڈیٹا کو مکمل طور پر ڈاؤن لوڈ نہیں کرلیا۔

TOPPOPULARRECENT