Sunday , July 22 2018
Home / ہندوستان / ’’نانک شاہ فقیر‘‘ فلم کی نمائش پر سپریم کورٹ کا عبوری حکم نامہ

’’نانک شاہ فقیر‘‘ فلم کی نمائش پر سپریم کورٹ کا عبوری حکم نامہ

نئی دہلی۔16 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے آج اس بات کو واضح کردیا کہ اس کا عبوری حکمنامہ جس کے ذریعہ علاقائی فلم نانک شاہ فقیر نمائش کے لیے جاری کرنے کی اجازت دی گئی ہے اور جو سکھوں کے پہلے گرو کی زندگی کے بارے میں تیار کی گئی ہے۔ اب بھی کارآمد ہے، چیف جسٹس دیپک مشرا کی زیر صدارت سپریم کورٹ کی بنچ نے کہا کہ وہ 8 مئی کو فلم پروڈیوسر اور شرومنی گرودوارا پربندھک کمیٹی کی جانب سے داخل کی گئی ہوئی جوابی درخواست کی سماعت کرے گی۔ سکھوں کی اعلی ترین مذہبی تنظیم نے سینئر ایڈوکیٹ آر ایس سوری کو اپنی پیروی کرنے کی اجازت دی ہے۔ وہ پروڈیوسر کی جانب سے عدالت میں پیش ہوں گے۔ انہو ںنے بنچ سے کہا کہ یہ فلم پہلے ہی ملک گیر سطح پر سوائے پنجاب کے ریلیز کی جاچکی ہے۔ سپریم کورٹ کی بنچ میں جسٹس اے ایم کھانڈولکر اور جسٹس ڈی وائی چندراچور بھی شامل تھے۔ بنچ نے کہا کہ بنیادی مسئلہ یہ ہے کہ گرونانک کی زندگی اور کارناموں پر مبنی اس تصویر کا مشاہدہ کیا جائے یا نہیں۔ عدالت نے کہا کہ عدالت تمام 10 سکھ گروئوں کی زندگی اور ان کے کارناموں کے بارے میں بنائی ہوئی فلموں کی نمائش اجازت دے چکی ہے۔ ان کے ارکان خاندان جو ’’پنج پیاروں‘‘ میں شامل ہیںجس کی اجازت دے چکے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT