Sunday , December 17 2017
Home / دنیا / ناگالینڈ میں بحران ، تشکیل حکومت کیلئے زیلیانگ کا ادعاء

ناگالینڈ میں بحران ، تشکیل حکومت کیلئے زیلیانگ کا ادعاء

چیف منسٹر کیخلاف بغاوت کرنے والے 10 ارکان اسمبلی برطرف
کوہما ۔ /9 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) ناگالینڈ میں چیف منسٹر شورہو زیلی لیزیستو کے خلاف ارکان اسمبلی کی بغاوت سے پیدا شدہ بحران میں آج مزید شدت پیدا ہوگئی جب انہوں نے استعفیٰ کا مطالبہ کرنے والے 10 باغی ارکان اسمبلی کو پارلیمانی سکریٹریز کے عہدہ سے برطرف کردیا ۔ اس دوران سابق چیف منسٹر ٹی آر زیلیانگ نے ریاست میں تشکیل حکومت کا ادعاء پیش کیا ہے اور کہا کہ انہیں 59 کے منجملہ 41 ارکان کی تائید حاصل ہے ۔ گورنر بی پی آچاریہ کے نام اپنے مکتوب میں زیلیانگ نے دعویٰ کیا تھا کہ حکمراں این بی ایف لجسلیچر پارٹی کے /4 جون کو منعقدہ اجلاس میں 47 کے منجملہ 34 ارکان نے ان کی تائید کرتے ہوئے تشکیل حکومت کا ادعا پیش کرنے کی خواہش کی تھی ۔ باغی ارکان اسمبلی نے لیزتسو سے جو ہنوز اسمبلی کے رکن منتخب نہیں ہوئے ہیں مستعفی ہوکر چیف منسٹر کے عہدہ پر زیلیانگ فائز ہونے کی راہ ہموار کریں ۔ زیلیانگ نے یہ دعویٰ بھی کیا کہ سات آزاد ارکان نے میں ان کی تائید کا اعلان کیا ہے جس کے ساتھ ہی ان کے حامی ارکان کی تعداد 59 کے منجملہ 41 تک پہونچ گئی ہے ۔ زیلیانگ نے گورنر سے درخواست کی کہ انہیں ناگا پیپلز فرنٹ کی قیادت میں نئی حکومت کے قیام کیلئے بعجلت ممکنہ مدعو کریں ۔ این بی ایف ذرائع نے کہا کہ اس کے 34 ارکان اسمبلی جنہوں نے زیلیانگ کی تائید کی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT