Monday , January 22 2018
Home / سیاسیات / نریندر مودی ایک ڈکٹیٹر، کانگریس کا الزام

نریندر مودی ایک ڈکٹیٹر، کانگریس کا الزام

نئی دہلی ۔ 15 ۔ اپریل (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی میں وزارت عظمیٰ کے امیدوار نریندر مودی کی جانب سے یہ کہے جانے پر کہ ان کے برسر اقتدار پر آنے کے امکانات سے کانگریس کانپ رہی ہے۔ حکمراں جماعت نے آج انہیں ایک ڈکٹیٹر قرار دیا اور کہا کہ نریندر مودی کے بارے میں ’’ہر ہر مودی‘‘ نہیں بلکہ ’’ڈر ڈر مودی‘‘ کہا جانا چاہئے۔ کانگریس کے ترجمان ابھی

نئی دہلی ۔ 15 ۔ اپریل (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی میں وزارت عظمیٰ کے امیدوار نریندر مودی کی جانب سے یہ کہے جانے پر کہ ان کے برسر اقتدار پر آنے کے امکانات سے کانگریس کانپ رہی ہے۔ حکمراں جماعت نے آج انہیں ایک ڈکٹیٹر قرار دیا اور کہا کہ نریندر مودی کے بارے میں ’’ہر ہر مودی‘‘ نہیں بلکہ ’’ڈر ڈر مودی‘‘ کہا جانا چاہئے۔ کانگریس کے ترجمان ابھیشک سنگھوی نے بی جے پی کی شعلہ بیان لیڈر اوما بھارتی پر بھی تنقید کی جنہوں نے کہا تھا کہ بی جے پی کے برسر اقتدار آنے کی صورت میں سونیا گاندھی کے داماد رابرٹ وڈرا جیل بھیج دیئے جائیں گے۔ ابھیشک سنگھوی نے مودی کے حامیوں کی جانب سے لگائے جانے والے نعرے ’’ہر ہر مودی‘‘ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اب ہر ہر مودی نہیں بلکہ ڈر ڈر مودی کہا جانا چاہئے اور ہر کسی کو ان سے کانپنا چاہئے ۔

سنگھوی نے کہا کہ نریندر مودی ایک ڈکٹیٹر ہیں جو 16 مئی کو کانگریس قائدین کو اپنے غلطیوں کی قیمت ادا کرنے کے بارے میں دھمکیاں دے رہے ہیں۔ سنگھوی نے کہا کہ ’’چونکہ ٹاؤن میں ایک نیا ڈکٹیٹر آیا ہے اور اوما بھارتی کے اس ڈکٹیٹر کیلئے کوئی قانون نہیں ہے اور کوئی عدالت نہیں ہے، کوئی مقدمہ نہیں ہے۔
اور نہ کوئی قانونی عمل ہے اور نہ ہی کوئی اپیل کی جاسکتی ہے۔ وہ آئے گا اور وہ سب کا آقا ہوگا اور وہ سب کو جیل میں ڈال دے گا‘‘۔ واضح رہے کہ مودی نے گزشتہ روز راجستھان کے لچمن گڑھ میں ایک ریالی سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’’کیا آپ جانتے ہیں آخر کیوں کانگریس کانپ رہی ہے؟ وہ جانتے ہیں کہ 16 مئی کے بعد وہ (کانگریس قائدین) کہاں ہوں گے ؟ انہوں نے کافی لوٹ کھسوٹ کی ہے اور انہیں حساب دینا ہوگا‘‘۔

TOPPOPULARRECENT