Thursday , November 15 2018
Home / Top Stories / نظام میوزیم سرقہ کا معمہ حل ‘ 2 سارقین گرفتار ‘ مسروقہ نادر اشیا برآمد

نظام میوزیم سرقہ کا معمہ حل ‘ 2 سارقین گرفتار ‘ مسروقہ نادر اشیا برآمد

ممبئی میں نوادرات فروخت کرنے کی کوشش ناکام ۔ کمشنر سٹی پولیس انجنی کمار کی پریس کانفرنس

حیدرآباد 11 ستمبر (سیاست نیوز) سٹی پولیس کی ٹاسک فورس ٹیم نے نظام میوزیم پرانی حویلی میں سرقہ کی واردات میں ملوث دو سارقین کو گرفتار کرکے اُن کے قبضہ سے مسروقہ نادر اشیاء برآمد کرلئے۔ کمشنر پولیس مسٹر انجنی کمار نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ حضور نظام کے میوزیم میں سرقہ منصوبہ بند طریقہ سے کیا گیا تھا جسے 23 سالہ محمد غوث پاشاہ عرف خونی پاشاہ اور اُس کے ساتھی 24 سالہ محمد مبین ساکن راجندر نگر نے انجام دیا تھا ۔ اُنھوں نے کہاکہ غوث پاشاہ عادی سارق ہے اور وہ سرقہ کی 15 سے زائد وارداتوں میں ملوث ہے جس کے نتیجہ میں اُسے گزشتہ سال اگسٹ میں پولیس راجندر نگر نے گرفتار کیا تھا اور وہ جاریہ سال جولائی میں ضمانت پر رہا ہوا تھا۔ اُنھوں نے کہاکہ غوث پاشاہ کا ساتھی محمد مبین سابق میں ملازمت کیلئے سعودی عرب گیا تھا جہاں اُس نے پاکستانی شہری کو شدید زدوکوب کیا تھا جس کے سبب اُسے ڈھائی ماہ تک جیل میں قید کردیا گیا تھا۔ مسٹر انجنی کمار نے کہاکہ سعودی عرب سے واپسی کے بعد مبین نظام میوزیم کے مشاہدہ کے لئے گیا تھا جہاں اُس نے سونے کے ٹفن باکس، سونے کی پیالی اور دیگر نادر اشیاء کو دیکھا ، جس کے بعد اِن اشیاء کے سرقہ کا منصوبہ تیار کیا۔ مبین نے اپنے ساتھی غوث پاشاہ سے ربط قائم کیا اور سرقہ کی واردات انجام دینے سے قبل میوزیم کا تفصیلی جائزہ لیا۔ دونوں نے روشن دان پر نشان لگایا اور وہاں سے اندر داخل ہونے حکمت عملی تیار کی۔ منصوبے کے تحت غوث پاشاہ اور مبین نظام میوزیم میں رات دیر گئے ایسے راستے سے داخل ہوئے جہاں پر سی سی ٹی وی کیمرے نصب نہیں تھے۔ دونوں سارقین نے شاطرانہ انداز میں میوزیم میں داخل ہونے دستانے پہن لئے اور چہروں پر ماسک لگا لیا۔ میوزیم سے سونے کے ٹفن باکس، پیالی، چمچ اور دیگر اشیاء کا سرقہ کرنے کے بعد راجندر نگر میں ڈیری فارم کے قریب زمین میں چھپادیا۔ بعدازاں اُسے نکال کر ممبئی منتقل کرتے ہوئے اُسے بین الاقوامی مارکٹ میں فروخت کرنے کی کوشش کی لیکن وہ ناکام رہے اور دوبارہ حیدرآباد واپس ہوگئے۔ کمشنر پولیس نے کہاکہ سرقہ کرنے کے بعد دونوں سارقین سونے کے ٹفن میں روزانہ کھانا کھارہے تھے۔ ٹاسک فورس نے سرقہ کے معمہ کو حل کرنے کے لئے علاقہ کے کئی سی سی ٹی وی کیمروں کی ریکارڈنگ کا تجزیہ کیا جس میں مبین کی گاڑی کی نشاندہی کی گئی جس کی بنیاد پر اُنھیں گرفتار کیا گیا۔

TOPPOPULARRECENT