Sunday , August 19 2018
Home / سیاسیات / نفرت انگیز تقاریر: کارروائی کا ہنوز فیصلہ نہیں کیا گیا

نفرت انگیز تقاریر: کارروائی کا ہنوز فیصلہ نہیں کیا گیا

نئی دہلی /12 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) الیکشن کمیشن نے انتخابی مہم کے دوران نفرت انگیز تقاریر کرنے والے قائدین کے خلاف کارروائی کے مسئلہ پر ہنوز کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے۔ سیاسی پارٹیوں کے خلاف کارروائی کرنے پر زور دیا جا رہا ہے۔ چیف الیکشن کمشنر وی ایس سمپت نے کہا ہے کہ انتخابی مہم کے دوران سیاسی پارٹیوں کو ذمہ دارانہ رول ادا کرنا چاہئے۔ مخ

نئی دہلی /12 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) الیکشن کمیشن نے انتخابی مہم کے دوران نفرت انگیز تقاریر کرنے والے قائدین کے خلاف کارروائی کے مسئلہ پر ہنوز کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے۔ سیاسی پارٹیوں کے خلاف کارروائی کرنے پر زور دیا جا رہا ہے۔ چیف الیکشن کمشنر وی ایس سمپت نے کہا ہے کہ انتخابی مہم کے دوران سیاسی پارٹیوں کو ذمہ دارانہ رول ادا کرنا چاہئے۔ مختلف مسائل پر سیاسی پارٹیوں کی رائے طلب کی جائے گی، جس کے بعد ہی الیکشن کمیشن کوئی فیصلہ کرے گا۔ اس سوال پر کہ آخر الیکشن کمیشن نے اب تک انفرادی مقررین کے خلاف کس حد تک کارروائی کی ہے؟۔ چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ دراصل یہ ایک اچھا سوال ہے۔ پارٹی کے اندر ہی اپنے لیڈر کے بارے میں موقف اختیار کیا جانا چاہئے، کیونکہ لیڈر کی تقریر سے ہی تنظیم کی نوعیت کا اظہار ہوتا ہے۔ الیکشن کمیشن نے کل ہی بی جے پی کے متنازعہ ایم پی یوگی آدتیہ ناتھ کی سرزنش کرتے ہوئے ان کی نفرت انگیز تقاریر کا نوٹ لیا تھا۔ الیکشن کمیشن نے ہندوتوا کٹر پسندوں کو انتباہ دیا تھا کہ وہ مبینہ طورپر انتخابی مہم کو مذہبی رنگ دینے کی کوشش نہ کریں۔ الیکشن کمیشن نے بی جے پی لیڈر کو تاکید کی تھی کہ جلسہ عام میں کی جانے والی تقریر احتیاط سے کی جائے۔

3 لوک سبھا اور 33 اسمبلی حلقوں کے لئے آج رائے دہی
نئی دہلی 12 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) لوک سبھا کے 3 اور 33 اسمبلی حلقوں کے لئے کل ضمنی انتخابات ہوں گے۔ یہ انتخابات نریندر مودی حکومت کی مقبولیت کے لئے ایک اور بڑا امتحان ثابت ہوں گے۔ مئی میں اقتدار حاصل کرنے والے مودی کی ریاست گجرات میں ودودرا لوک سبھا حلقہ کے لئے بھی رائے دہی ہو رہی ہے۔ اس کے علاوہ اتر پردیش کے مین پوری اور تلنگانہ کے میدک ضلع میں بھی رائے دہی ہوگی۔ راجستھان 11 ، مغربی بنگال 2 ، شمال مشرقی ریاستوں میں 5، چھتیس گڑھ اور آندھرا پردیش میں ایک ایک اسمبلی حلقے کے لئے بھی پولنگ ہوگی۔ 16 ستمبر کو نتائج کا اعلان کیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT