Wednesday , November 22 2017
Home / اضلاع کی خبریں / نلگنڈہ میں خوفناک سڑک حادثہ،10افراد ہلاک

نلگنڈہ میں خوفناک سڑک حادثہ،10افراد ہلاک

22شدید زخمی، 10کی حالت تشویشناک، دولاکھ ایکس گریشیا دینے چیف منسٹر کا اعلان

نلگنڈہ۔/7اکٹوبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ضلع نلگنڈہ میں آر ٹی سی بس اور لاری کے درمیان ہوئے خوفناک سڑک حادثہ میں 10افراد ہلاک، اور 22شدید زخمی ہوگئے۔ 10مسافرین کی حالت تشویشناک بتائی گئی ہے۔ تفصیلات کے بموجب ضلع کے نارکٹ پلی ڈپو کی آر ٹی سی بس اے پی 29 زیڈ 2270 جو بھونگیر سے نلگنڈہ آرہی تھی کہ رامنا پیٹ منڈل موضع اندرا پال نگر کے موڑ پر مخالف سمت سے کتابوں سے لدی تیز رفتار لاری نے ٹکر دے دی جس کی وجہ سے بس بے قابو ہوکر سڑک کے کنارے چھوٹے سے کھڈ میں اُتر گئی۔ حادثہ اتنا شدید تھا کہ ڈرائیور کی سمت کا مکمل حصہ تباہ ہوگیا۔ حادثہ کے وقت بس میں 33افراد سوار ہونے کی اطلاع ہے۔ حادثہ پیش آتے ہی مقامی دیہی عوام نے فوری جائے حادثہ پر پہنچ کر بچاؤ اور زخمیوں کو دواخانہ منتقل کرنے کی کوشش کی اور 108 اور پولیس کو اطلاع دی۔ پولیس بھی فوری متحرک ہوکر جائے حادثہ پر پہنچ کر تمام زخمیوں کو رامنا پیٹ ایریا دواخانہ منتقل کردیا اور نعشوں کو بس سے نکالنے کیلئے کرین کی مدد حاصل کی گئی ہے۔ مقام حادثہ پر دلخراش منظر دیکھائی دے رہا تھا۔ مہلوکین کی 45سالہ اے وینکنا ڈی سی ایم ڈرائیور ساکن کٹنگور منڈل32سالہ بھوپتی سری دیوی خانگی ملازم ایوش دواخانہ نکریکل، 50سالہ یالہ ملا ریڈی آر ڈی سی ڈرائیور ساکن چنا توملاگوڑ نارکٹ پلی منڈل، 20سالہ سیدہ سعدیہ اسٹوڈنٹ ساکن توملا گوڑہ، 20سالہ کے اشونی ساکن بھونگیر، 40سالہ جی سرینواس سینئر اسسٹنٹ زیڈ پی ایچ ایس گونے پلی ساکن این جی کالونی نلگنڈہ مستقر، 40 سالہ نامعلوم فرد اور 30 سالہ خاتون کے علاوہ 9ماہ کے بچہ کی شناخت نہیں ہوسکی۔ تمام شدید زخموں کو ابتدائی طبی امداد کے بعد نارکٹ پلی میں واقع کامنینی دواخانہ منتقل کیا گیا جہاں پر 24سالہ وجے لکشمی ساکن اپل حیدرآباد زخموں سے جانبر نہ ہوسکی۔ بس میں سوار مابقی 22افراد بھی زخمی ہوگئے جن میں 10افراد کی حالت تشویشناک بتائی گئی ہے۔ حادثہ کی اطلاع پر ضلع کلکٹر نلگنڈہ پی ستیہ نارائنا ریڈی ضلع مہتمم پولیس وکرم جیت دگل، رکن اسمبلی نکریکل ویریشم   جائے حادثہ پر پہنچ گئے۔ حادثہ کی اطلاع پر ریاستی وزیر داخلہ مسٹر این نرسمہا ریڈی ، ٹرانسپورٹ وزیر مسٹر مہیندر ریڈی، ریاستی وزیر برقی مسٹر جی جگدیش ریڈی نے جائے حادثہ پر پہنچ کر تفصیلات سے واقفیت حاصل کی اور ایریا دواخانہ پہنچ کر زخمیوں کی عیادت کی اور کامنینی دواخانہ میں شریک زخمیوں سے ملاقات کی اور معیاری طبی امداد پہنچانے کی ڈاکٹرس کو ہدایت دی۔ ان قائدین نے بتایا کہ تمام مہلوکین کو آر ٹی سی کی جانب سے ایک لاکھ روپئے اور حکومت کی جانب سے ایک لاکھ روپئے ایکس گریشیا دینے کا اعلان کیا۔ توقع ہے کہ کچھ دیر میں چیف منسٹر تلنگانہ مسٹر چندر شیکھر راؤ بھی حادثہ کے مقام پر پہنچ کر معائنہ کریں گے۔ رامنا پیٹ پولیس نے مقدمہ درج کرکے تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔دریں اثناء اسمبلی میں چیف منسٹر نے اس خوفناک حادثہ پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے مہلوکین کے ورثاء کو فی کس دو لاکھ ایکس گریشیا دینے کا اعلان کیا۔

TOPPOPULARRECENT