Monday , November 20 2017
Home / ہندوستان / نماز کی ادائیگی سے جسمانی و روحانی صحت

نماز کی ادائیگی سے جسمانی و روحانی صحت

حالت ِ سجدہ میںجسم کے جوڑ لچکدار ہوجاتے ہیں: تحقیقی رپورٹ
نئی دہلی 9 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) مسلمانوں کے لئے دن میں پانچ مرتبہ نماز کی ادائیگی فرض ہے اور وہ کماحقہ اِسے ادا کرتے ہیں۔ سائنسدانوں نے تحقیق کے ذریعہ یہ ثابت کیا ہے کہ نماز کی ادائیگی جسمانی صحت کے لئے بھی انتہائی مفید اور کارآمد ہے۔ بالخصوص جسم کے مختلف جوڑوں اور کمر درد کے معاملے میں نماز کے دوران ادا کئے جانے والے ارکان سے کافی مدد ملتی ہے اور سائنسدانوں کے لئے یہ بھی ایک حیرت انگیز بات رہی کہ حالت سجدہ میں جسم کے وہ اعضاء بہتر اور مضبوط ہوتے ہیں جو عام طور پر دیگر کسی بھی ورزش یا جسمانی حرکت سے نہیں ہوتے۔ اِس تحقیق میں کمپیوٹر کے ذریعہ ماڈلس سے استفادہ کیا گیا اور نماز کے دوران ادا کئے جانے والے مختلف ارکان جیسے رکوع و سجود اور قیام کا بغور جائزہ لیا گیا۔ سائنسدانوں نے یہ انکشاف کیاکہ حالتِ سجدہ میں جسم کی ہیئت تبدیل ہوجاتی ہے اور تمام جوڑوں کی لچک بڑھ جاتی ہے۔ اگر کوئی شخص دن میں ایک مرتبہ ایسا کرے تو یہ اُس کی صحت کے لئے کافی ہے اور اگر دن میں پانچ مرتبہ نماز کے دوران سجدے سے جو فوائد ہوں گے وہ ناقابل بیان ہیں۔ اِس تحقیقی رپورٹ کے معاون مصنف پروفیسر خساوانی کا کہنا ہے کہ ایک عام آدمی یہی سمجھتا ہے کہ نماز کی حرکات بھی یوگا یا کسی جسمانی کثرت کی طرح ہے لیکن حقیقت میں یہ اِس سے زیادہ فائدہ مند ہے بالخصوص نماز ادا کرنے والوں کو کمر کا درد بھی نہیں ہوتا۔ جسمانی صحت کا سماجی و معاشی حالات، طرز زندگی اور مذہب سے گہرا تعلق ہوتا ہے۔ تحقیق میں یہ بتایا گیا ہے کہ نماز اور جسمانی صحت کی برقراری کے درمیان گہرا تعلق ہے۔ نماز کی ادائیگی سے تناؤ اور بے چینی کی کیفیت ختم ہوتی ہے۔ یہ بھی پتہ چلا کہ نماز کی ادائیگی کئی اعصابی اور دیگر امراض سے علاج کا مؤثر ذریعہ ہے۔ دلچسپ پہلو یہ ہے کہ نماز کے دوران سجدے کی ادائیگی کا جو طریقہ نبی آخرالزماں محمد صلی اللہ علیہ و سلم نے اُمت مسلمہ کو سکھایا ہے وہی طریقہ کار کا تذکرہ بائبل میں بھی پایا جاتا ہے۔ تحقیقی رپورٹ میں بائبل کے ایک جملے کا حوالہ دیا گیا کہ ’’اور جب (عیسیٰ علیہ السلام) جھک گئے یہاں تک کہ اُنھوں نے اپنا چہرہ زمین پر ٹیک دیا اور دعا کی‘‘ (میتھیو 26:39) ۔ اِسی طرح ایک اور جملہ ’’اور یوشع اپنے چہرے کے بل زمین پر جھک گئے اور اُنھوں نے آہ و زاری کی‘‘۔ (یوشع : 5:14)

TOPPOPULARRECENT