Monday , January 22 2018
Home / Top Stories / نواز شریف کو دعوت نامہ آخرکار قبول، کل مودی کی تقریب میں شرکت

نواز شریف کو دعوت نامہ آخرکار قبول، کل مودی کی تقریب میں شرکت

اسلام آباد ، 24 مئی (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم پاکستان نواز شریف دوشنبہ کو ہندوستان کا سفر کریں گے تاکہ نامزد وزیراعظم نریندر مودی کی تقریب حلف برداری میں شرکت کرسکیں، جس کے ساتھ اُن کے دورے کے بارے میں تجسس ختم ہوگیا جبکہ ایسی اطلاعات آئیں کہ یہاں نظم و نسق میں کٹرپسندوں کی طرف سے سخت مخالفت ہوئی۔ دفتر وزیراعظم کے ایک عہدہ دار نے ہندو

اسلام آباد ، 24 مئی (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم پاکستان نواز شریف دوشنبہ کو ہندوستان کا سفر کریں گے تاکہ نامزد وزیراعظم نریندر مودی کی تقریب حلف برداری میں شرکت کرسکیں، جس کے ساتھ اُن کے دورے کے بارے میں تجسس ختم ہوگیا جبکہ ایسی اطلاعات آئیں کہ یہاں نظم و نسق میں کٹرپسندوں کی طرف سے سخت مخالفت ہوئی۔ دفتر وزیراعظم کے ایک عہدہ دار نے ہندوستانی نیوز ایجنسی ’پی ٹی آئی‘ کو بتایا کہ نواز شریف نے دعوت نامہ قبول کرلیا اور دوشنبہ کو مودی کی حلف برداری تقریب میں شرکت کیلئے ہندوستان کا دورہ کریں گے۔ انھوں نے اس دورے اور نواز شریف کے ایجنڈے کے تعلق سے تفصیلات نہیں بتائیں لیکن دفتر خارجہ کے عہدہ دار نے کہا کہ دونوں وزرائے اعظم کے درمیان علحدہ میٹنگ منعقد ہوسکتی ہے جہاں پاکستان تمام مسائل کو سامنے لائے گا۔ نواز شریف نے فیصلہ کرنے سے قبل وقت لیا

کیونکہ وہ دہلی کا سفر کرنے سے قبل اتفاق رائے چاہتے تھے۔ انھوں نے پورے دو یوم سیاسی جماعتوں، قائدین اور ملٹری کے عہدیداروں سے بات چیت میں صرف کئے۔ پاکستان مسلم لیگ ۔ نواز کے ایک سینئر لیڈر نے پی ٹی آئی کو بتایا کہ نواز شریف نے چاہا کہ اس سفر کو بامعنی بنایا جائے، نہ کہ محض تعلقات بڑھانے کا اقدام ہو۔ انھوں نے اس تاثر کو مسترد کردیا کہ پاکستان نے کافی وقت لیا ہے، اور کہا کہ مشاورتیں ناگزیر تھیں کیونکہ مودی نے اپنی انتخابی مہم کے دوران پاکستان کے خلاف سخت تقاریر کئے تھے۔ نواز شریف کی جانب سے تقریب حلف برداری میں اپنی شرکت کی توثیق میں تاخیر کو فوجی انتظامیہ میں کٹرپسندوں کی طرف سے مخالفت سے منسوب کیا گیا ہے۔ مودی نے اپنی تقریب کیلئے سارک کی رکن مملکتوں کے تمام قائدین کو مدعو کیا ہے۔

مودی کی تقریب میں نواز شریف کی موجودگی پر شیوسینا خاموش
ممبئی کی اطلاع کے بموجب این ڈی اے کی کلیدی پارٹی شیوسینا جو ہندوستان میں دہشت گردی کی ’’سرپرستی‘‘ کیلئے پاکستان کے خلاف آواز اٹھاتی رہی ہے، آج اس نے خاموشی اختیار کررکھی ہے جبکہ پڑوسی وزیراعظم نواز شریف نے 26 مئی کو مودی کی تقریب میں شرکت کیلئے دعوت نامہ کو قبول کرلیا ہے۔ شیوسینا ترجمان و راجیہ سبھا رکن سنجے راوت نے تبصرے سے انکار کیا جب نواز شریف کی توثیق پر اُن کی پارٹی کے ردعمل کے تعلق سے پوچھا گیا۔

TOPPOPULARRECENT