Tuesday , December 12 2017
Home / شہر کی خبریں / نوجوانان مہدویہ چنچل گوڑہ کا شدید احتجاج

نوجوانان مہدویہ چنچل گوڑہ کا شدید احتجاج

گستاخ رسوؐل کملیش تیواری کے خلاف کارروائی کرنے کا مطالبہ
حیدرآباد ۔ 15 ڈسمبر (سیاست نیوز) پرانے شہر کے علاقہ چنچلگوڑہ میں آج نوجوانان مہدویہ تنظیم کی جانب سے گستاخ رسول ؐ کملیش تیواری کے خلاف سخت احتجاج کرتے ہوئے ریالی منظم کی گئی اور گستاخ کو کیفرکردار تک پہنچانے کا حکومت سے مطالبہ کیا گیا۔ نوجوانان مہدویہ چنچلگوڑہ کی جانب سے نکالی گئی ریالی میں محلہ کے بزرگ کے علاوہ نوجوانوں کی بڑی تعداد موجود تھی جوکہ ریالی کی شکل میں چنچلگوڑہ کھلہ سے روانہ ہوئے اور مختلف علاقوں سے گذرتے ہوئے دبیرپورہ فلائی اوور کے قریب پہنچے جہاں احتجاجی نوجوانوں نے گستاخ کملیش تیواری کا پتلا نذرآتش کرتے ہوئے غم و غصہ کا اظہار کیا۔ اس احتجاجی ریالی میں معراج دلدار خاں، سید مصدق حسین خوندمیری، سید عبدالقادر مجاہد، الطاف نصیر خان، سید مسعود محمودی، سید راج محمد اشفاق، ذبیح اللہ خان، سید امجد محمودی، سلمان محمد خان، سید محمد بخاری کے علاوہ سینکڑوں نوجوان موجود تھے جوکہ گستاخ رسول ؐ کے خلاف سخت برہمی کا اظہار کررہے تھے۔ نوجوانوں نے اس موقع پر بتایا کہ وہ بالکلیہ طور پر غیر سیاسی احتجاج منظم کررہے ہیں اور نبی اکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی شان میں ہوئی گستاخی پر ہر دل مغموم ہے۔ غم و غصہ کے اظہار کے دستوری طریقہ کار کو اپناتے ہوئے نوجوانوں کی جانب سے حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ حکومت فوری طور پر اس سنگین مسئلہ کا نوٹ لیتے ہوئے کملیش تیواری کو پھانسی کی سزاء دلوانے میں گریز نہ کریں بصورت دیگر اس کے سنگین نتائج برآمد ہوسکتے ہیں۔ احتجاجی نوجوانوں نے مطالبہ کیا کہ مذہبی پیشواؤں و رہنماؤں کی شان میں کسی قسم کی گستاخی نہ ہو اس سلسلہ میں ایک قانون بنائے جانے کی ضرورت ہے چونکہ آئے دن کی جانے والی گستاخی سے دلبرداشتہ نوجوانوں کے صبر کا پیمانہ لبریز ہوسکتا ہے اسی لئے حکومت کو چاہئے کہ وہ مستقبل میں حالات پرامن رکھنے اور کسی بھی طبقہ کے مذہبی جذبات کو مجروح ہونے سے بچانے کیلئے فوری قانون سازی کو یقینی بنائے۔

TOPPOPULARRECENT