Friday , December 15 2017
Home / کھیل کی خبریں / نوجوانوں کو فٹنس کے محاذ پر بہتری کی ضرورت : بوپنا

نوجوانوں کو فٹنس کے محاذ پر بہتری کی ضرورت : بوپنا

چندی گڑھ 17 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) روہن بوپنا نے ہندوستانی نوجوانوں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ چیلنجنگ حالات سے نمٹنے کیلئے اپنے آپ کو فٹ رکھیں۔ بوپنا کو ایشیا / اوشیانا گروپ 1 ڈیوس کپ مقابلہ میں جنوبی افریقہ کے خلاف چوتھا میچ بھی کھیلنا پڑا تھا جبکہ ساکیٹ مئنینی فٹنس کے مسئلہ کی وجہ سے دستبردار ہوگئے تھے ۔ مئینینی کو سارے جسم میں کھنچاوٹ اور تکلیف شروع ہوگئی تھی جبکہ انہوں نے جمعہ کو انتہائی گرم اور مرطوب حالات میں دوسرا میچ کھیلا تھا ۔ بوپنا کو چار برس کے وقفہ کے بعد ڈیوس کپ میں ایک سنگلز میچ کھیلنا پڑآ تھا تاہم انہوں نے بائیں ہاتھ کے چونگ ہونگ کے خلاف مقابلہ 3 – 6, 6 – 4, 6 – 4 سے جیت لیا تھا اور ہندوستان کو 4 – 0 کی سبقت دلادی تھی ۔ نہ صرف مئینینی بلکہ کوریا کے یونگ کئیو لم اور سیونگ چان ہونگ کو بھی حالات سے خود کو ہم آہنگ کرنے میں انتہائی مشکلات پیش آئیں اور انہیں بھی فٹنس کے مسائل درپیش ہوئے تھے ۔ بوپنا نے میچ کے بعد اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ نوجوانوں کو فٹ ہونا چاہئے تاکہ وہ ضرورت پڑنے پر پانچ سیٹوں کا میچ کھیل سکیں۔ انہیں پوری طرح تیار رہنے کی ضرورت تھی ۔ قسمت کی بات ہے کہ ہم پہلے ہی دن 2 – 0 سے آگے تھے اور ہم نے کل ہی موقع کا فائدہ اٹھالیا ۔ اگر ہم ایک میچ ہار جاتے تو ان میں سے کسی ایک اور کھلاڑی کو آگے آکر آج میچ کھیلنا پڑتا ۔ انہوں نے کہا کہ ہم سیکھ رہے ہیں۔ یہ حکمت عملی والا معاملہ ہے ۔ کپتان اور کوچ کو مل بیٹھ کر غور کرنے اور یہ فیصلہ کرنے کی ضرورت ہے کہ حالات کے حساب سے ہمیں کس کھلاڑی کو موقع دینے کی ضرورت ہے ۔ ہم کو تمام چیزوں پر غور کرنا چاہئے ۔ بوپنا نے ڈیوس کپ میں اپنا آخری سنگلز میچ 2012 میں کھیلا تھا جب انہوں نے ازبیکستان کے سرور اکراموف کے خلاف پانچواں میچ جیتا تھا ۔ چونگ ہونگ کے خلاف میچ میں پہلا سیٹ ہار جانے اور دوسرے سیٹ میں بھی آخری لڑکھڑانے کے تعلق سے اظہار خیال کرتے ہوئے بوپنا نے کہا کہ وہ ایسے حالات کے عادی ہوچکے ہیں اور چونکہ وہ ڈبلز زیادہ کھیل رہے تھے اس لئے انہیں مشکلات پیش آئیں ۔ تاہم اچھی بات یہ ہے کہ انہوں نے اپنی خامیوں پر قابو پاتے ہوئے اچھی مزاحمت کی اور کامیابی حاصل کرلی ۔

TOPPOPULARRECENT