Monday , June 18 2018
Home / ہندوستان / نوجوان قائدین کی 2019ء میں بی جے پی سے مقابلہ کیلئے ممتا بنرجی سے ربط

نوجوان قائدین کی 2019ء میں بی جے پی سے مقابلہ کیلئے ممتا بنرجی سے ربط

نئی دہلی۔20 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ملک گیر سطح سے نوجوان قائدین صدر ترنمول کانگریس ممتا بنرجی سے 2019ء کے عام انتخابات میں بی جے پی سے مقابلہ کرنے کے لیے رہنمائی طلب کرتے ہوئے ملاقاتوں کا آغاز کردیا ہے۔ صدر ترنمول کانگریس ممتا بنرجی نے ایک دن قبل مبینہ طور پر پاٹیدار کوٹہ احتجاج کے قائد ہاردک پٹیل اور گجرات کے دلت قائد جگنیش میوانی سے ٹیلی فون پر بات چیت کی تھی۔ ترنمول کانگریس قائد ڈریرک اوبرائن نے کہا کہ نوجوان قائدین کو یقین ہے کہ صدر ترنمول کانگریس سے انہیں فائدہ حاصل ہوگا۔ ان کی ساکھ بہترین ہوجائے گی اور وہ 2019ء میں بی جے پی مقابلہ کرسکیں گے۔ او بی سی قائد الپیش ٹھاکر نے کہا کہ مجھے حیرت نہیں ہے کہ ملک گیر سطح پر نوجوان قائدین ممتا بنرجی سے رہنمائی کے لیے اور ان کے تجربات سے سیکھنے کے لیے ربط پیدا کررہے ہیں۔ ممتا بنرجی کی ساکھ بہترین ہے اور وہ 2019ء میں بی جے پی سے مقابلہ کرسکتی ہیں۔ ہاردک پٹیل، جگنیش میوانی، او بی سی قائد الپیش ٹھاکر جنہوں نے گجرات انتخابات میں اہم کردار ادا کرتے ہوئے بی جے پی سے سخت جنگ کی ہے جو گزشتہ 22 سال سے ریاست پر برسر اقتدار ہے ممتا بنرجی سے ربط پیدا کرنے والوں میں شامل تھے۔ ٹھاکر نے کانگریس کے ٹکٹ پر اور میوانی نے آزاد امیدوار کی حیثیت سے جسے کانگریس کی تائید حاصل تھی، گجرات انتخابات میں کامیابی حاصل کی ہے۔ اوبرائن نے کہا کہ صدر ترنمول کانگریس کو یقین ہے کہ بھگوا پارٹی کو 2019ء کے عام انتخابات میں شکست دی جاسکتی ہے اگر تمام مخالف بی جے پی طاقتیں متحد ہوجائیں۔ راجیہ سبھا رکن ترنمول کانگریس نے کہا کہ ممتا بنرجی کا تجربہ، ان کا ریکارڈ گزشتہ 40 سال سے عوامی تحریکوں میں ان کا کردار اور کابینی وزیر کی حیثیت سے ان کا تجربہ گزشتہ سال مغربی بنگال اسمبلی انتخابات میں ترنمول کانگریس کو شاندار کامیابی دلواچکا ہے اور بی جے پی سے لڑنے میں ان کی ساکھ بہترین ہوگئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT