Monday , September 24 2018
Home / اضلاع کی خبریں / نوجوان ‘ روزگار سے مربوط تعلیم حاصل کریں

نوجوان ‘ روزگار سے مربوط تعلیم حاصل کریں

ظہیرآباد ۔ 16 ؍ فبروری ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ریاستی وزیر بھاری مصنوعات ڈاکٹر جے گیتا ریڈی نے کہا کہ مختلف صنعت گاہیں عصر حاضر میں روزگار کے اہم ذرائع ہیں ۔ اس لئے نوجوانوں کو چاہئے کہ وہ ایسی تعلیم حاصل کریں جو انہیں روزگار سے مربوط کرنے میں اہم رول ادا کرے ۔ ڈاکٹر گیتاریڈی یہاں ایم باگاریڈی اسٹیڈیم میں منعقدہ یوتھ فیسٹول 2014 کے شرکاء

ظہیرآباد ۔ 16 ؍ فبروری ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ریاستی وزیر بھاری مصنوعات ڈاکٹر جے گیتا ریڈی نے کہا کہ مختلف صنعت گاہیں عصر حاضر میں روزگار کے اہم ذرائع ہیں ۔ اس لئے نوجوانوں کو چاہئے کہ وہ ایسی تعلیم حاصل کریں جو انہیں روزگار سے مربوط کرنے میں اہم رول ادا کرے ۔ ڈاکٹر گیتاریڈی یہاں ایم باگاریڈی اسٹیڈیم میں منعقدہ یوتھ فیسٹول 2014 کے شرکاء کو مخاطب کر رہی تھیں ۔ انہوں نے کہا کہ حصول تعلیم کا مقصد حصول روزگار ہونا چاہئے ۔ خواہ وہ روزگار سرکاری یا غیر سرکاری سیکٹر میں ہی فراہم کیوں نہ ہو۔ انہوں نے یاد دلایا کہ ظہیرآباد کو ایک صنعتی علاقہ کی حیثیت حاصل ہوگئی ہے اور مستقبل قریب میں کئی بڑی صنعتوں کے قیام کے امکانات روشن ہوگئے ہیں۔ اس لئے ان صعنتوں میں روزگار کے حصول کے لئے ظہیرآباد میں ہی ایک انڈسٹریل ٹریننگ سنٹر کے قیام کی شدید ضرورت محسوس کی جا رہی تھی جس کی تکمیل ریاستی حکومت نے اسی ماہ میں منظوری دے کر کر دی ہے جبکہ مجوزہ آئی ٹی آئی کے قیام کے لئے مہندرا اینڈ مہندرا لمیٹیڈ ظہیرآباد نے ایک کروڑ روپئے کا عطیہ دیا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ مجوزہ آئی ٹی آئی میں الکٹریشن ایم ایم وی اور ڈی ایم (سیول) کے دو سالہ کورسس کی تربیت دی جائیگی ۔ انہوں نے مقامی بیروزگار افراد کو روزگار کی فراہمی کے لئے مزید صنعتوں کے قیام کی ضرورت ظاہر کی ۔ انہوں نے عنقریب چار پہیوں والی موٹر گاڑیاں تیار کرنے والی صنعت گاہ کے قیام کا انکشاف کیا ۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ تین برسوں میں ظہیرآباد کی ہیت تبدیل ہوجائیگی ۔ انہوں نے کہا کہ طلبہ کو روزگار سے مربوط کرنے کے لئے ہوٹل مینجمنٹ اور اگریکلچرل پالی ٹیکنک کالج کا قیام عمل میں لایا گیا جبکہ منظورہ گرلز ڈگری کالج میں تعلیمی سرگرمیوں کا آغاز آئندہ تعلیمی سال سے ہوگا ۔ اردو میڈیم کے طلبا دو طالبات کے لئے ٹیچرس ٹریننگ سنٹر کا بھی قیام عمل میں لایا جا رہا ہے ۔ انہوں نے طلبا کو حصول تعلیم کے ساتھ ساتھ اسپورٹس میں بھی نمایاں حصہ لینے پر زور دیا اور کہا کہ موجودہ دور میں اسپورٹس بھی معیشت کے استحکام میں اہم رول ادا کر رہے ہیں ۔ انہوں نے اس ضمن میں سچن ٹنڈولکر‘ سنیل گاواسکر اور دوسرے کھلاڑیوں کی مثال دی ۔ انہوں نے کہا کہ نوجوان نسل کی قوت کاکردگی کو بروے کار لائے بغیر زندگی کا کوئی شعبہ ترقی نہیں کرسکتا ۔ انہوں نے نوجوانوں پر زور دیا کہ وہ اپنی طاقت کا غلط استعمال نہ کریں اور اپنی تمام تر توجہ مستقبل کو بنانے پر مرکوز کریں ۔

TOPPOPULARRECENT