Wednesday , September 26 2018
Home / عرب دنیا / نوری المالکی نے حیدرالعبادی کی نامزدگی مسترد کردی

نوری المالکی نے حیدرالعبادی کی نامزدگی مسترد کردی

بغداد۔ 12 اگست ۔ ( سیاست ڈاٹ کام )عراق کے موجودہ وزیراعظم نوری المالکی نے صدر فواد معصوم کی جانب سے نامزد کیے گئے وزیراعظم حیدر العبادی کو مسترد کردیا ہے جس کے بعد خانہ جنگی کا شکار ملک مزید بحران کا شکار ہوگیا ہے۔نوری المالکی کی جماعت دعؤکے ایک قائد کے خلاف عبدالصمد نے سرکاری ٹیلی ویژن پر ایک بیان پڑھ کر سنایا ہے جس میں کہا ہے کہ ’’ن

بغداد۔ 12 اگست ۔ ( سیاست ڈاٹ کام )عراق کے موجودہ وزیراعظم نوری المالکی نے صدر فواد معصوم کی جانب سے نامزد کیے گئے وزیراعظم حیدر العبادی کو مسترد کردیا ہے جس کے بعد خانہ جنگی کا شکار ملک مزید بحران کا شکار ہوگیا ہے۔نوری المالکی کی جماعت دعؤکے ایک قائد کے خلاف عبدالصمد نے سرکاری ٹیلی ویژن پر ایک بیان پڑھ کر سنایا ہے جس میں کہا ہے کہ ’’نامزد وزیراعظم حیدرالعبادی اپنی ہی نمائندگی کرتے ہیں‘‘۔ وہ جب یہ بیان پڑھ رہے تھے توتناؤ کا شکار وزیراعظم نوری المالکی ان کے ساتھ کھڑے تھے۔وہ خود تیسری مدت کیلئے عراق کا وزیراعظم بننا چاہتے ہیں حالانکہ اب کرد اور سنی سیاست دانوں

اور شیعہ مذہبی قائدین کے علاوہ امریکہ ان کی کھلم کھلا مخالفت کررہا ہے لیکن وہ اس سب کے باوجود برسراقتدار رہنے پر مصر ہیں اور حکومت چھوڑنے کو تیار نہیں۔انھوں نے پیر کو صدر فواد معصوم کی جانب سے عراقی قومی اتحاد کے حیدرالعبادی کو نیا وزیراعظم نامزد کیے جانے کے بعد دارالحکومت بغداد میں ملیشیاؤں اور خصوصی دستوں کو تعینات کردیا ہے جس سے خطرناک سیاسی محاذ آرائی کی صورت حال پیدا ہوگئی ہے۔عراق میں امریکی سفیروں کے مشیر اور ایک سابق عہدے دار علی خضری نے ٹویٹر پر اطلاع دی ہے کہ نوری المالکی نے بغداد کے انتہائی سکیورٹی والے علاقے گرین زون کو سیل کردیا ہے۔اس علاقے میں غیرملکی سفارت خانے اور وزیراعظم کے دفتر سمیت اہم سرکاری دفاتر واقع ہیں۔نوری المالکی کی جماعت دعؤ نے نئے وزیراعظم کی نامزدگی کو غیر قانونی قرار دیا ہے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT