Tuesday , November 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / نڈال کا یوایس اوپن کے فائنل میں اینڈرسن سے مقابلہ

نڈال کا یوایس اوپن کے فائنل میں اینڈرسن سے مقابلہ

افریقی کھلاڑی کو پہلا گرانڈسلام خطاب حاصل کرنے کا موقع

نیویارک۔9 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام)عالمی نمبر ایک اسپین کے ٹینس اسٹار رافل نڈال کو 16 واں گرانڈ سلام خطاب حاصل کرنے کا سنہری موقع دستیاب ہوگیا ہے جیسا کہ انہوں نے آج کھیلے گئے یوایس اوپن 2017 کے دوسرے سیمی فائنل میں ارجنٹینا کے یان مارٹن ڈیل پوٹرو کو پہلا سٹ گنوانے کے باوجود4-6, 6-0, 6-3, 6-2 سے شکست دیکر فائنل میں رسائی حاصل کرلی ہے جہاں انکا مقابلہ پہلی مرتبہ گرانڈ سلام کے فائنل میں رسائی حاصل کرنے والے جنوبی افریقی کھلاڑی کیون اینڈرسن سے ہوگا جنہوں نے پہلے سیمی فائنل میں پابلوکرینوبوسٹا کو 4-6, 7-5, 6-3, 6-4 کوشکست دی۔اینڈرسن کی یہ کامیابی اس لئے بھی اہمیت کی حامل رہی کیونکہ بوسٹا نے سیمی فائنل میں رسائی سے قبل ایک بھی سٹ نہیں گنوایا تھا اور اس مقابلے کے آغاز پر بھی انہوں پہلا سٹ اپنے نام کرتے ہوئے بہتر شروعات کی تھی۔نڈال اور ڈیل پوٹرو کے درمیان کھیلے جانے والے مقابلے کو مسابقتی ہونے کی امید کی جارہی تھی کیونکہ 8 سال قبل یہاں اسی مرحلے پر نڈال کو حریف کھلاڑی کے خلاف اپنے کرئیر کا ایک شرمناک شکست برداشت کرنی پڑی تھی جس میں وہ صرف 6 گیمز ہی جیب پائے تھے اور اس مقابلے سے قبل ڈیل پوٹرو نے 2017 کے گرانڈ سلام ٹورنمنٹس میں ناقابل شکست رہنے والے راجر فیڈرر کو حیران کن شکست سے دوچار کیا تھا لیکن اس مرتبہ سیمی فائنل میں پہلا سٹ گنوانے کے باوجودشاندار واپسی کی۔

کامیابی کے بعد اظہار خیال کرتے ہوئے نڈال نے کہا کہ آج مجھے بہتر مظاہرہ کرنا تھا اور کامیابی کے لئے اپنے تمام تر تجربے کو بروئے کار لانا تھا۔ میں محسوس کررہا تھا کہ میں درست سمت اپنا کھیل لے جارہا ہوں اور مقابلے کے نتیجہ پر میں کافی خوش ہوں۔دوسری جانب بہتر آغاز کے باوجود شکست کے بعد اظہار خیال کرتے ہوئے ڈیل پوٹرو نے کہا کہ میرے بیک ہنڈ گرانڈ سلام حاصل کرنے کے قابل نہیں رہا۔ ندال اس مقابلے میں جان چکے تھے کہ ڈیل پوٹرو کا سب سے بڑی کمزوری انکا فورہنڈ اسٹروک ہے لہذا نڈال نے اس کا پورا فائدہ اٹھایا۔دوسری جانب اینڈرسن 1973 کے بعد فائنل میں رسائی حاصل کرنے والے کم درجہ بندی کے کھلاڑی ہیں اور وہ پہلی مرتبہ کوئی گرانڈ سلام فائنل کھیلیں گے۔2004 فرنچ اوپن کے بعد اینڈرسن کم درجہ والے گرانڈ سلام چیمپئن بن سکتے ہیں اگر وہ نڈال کو شکست دینے میں کامیاب ہوتے ہیں۔

میڈیسن اور اسٹیفنز میں خواتین کا فائنل
امریکہ کی نامور ٹینس اسٹارز میڈیسن کیز اور سلونی اسٹیفنز نے فتوحات کا سلسلہ برقرار رکھتے ہوئے یو ایس اوپن ٹینس ٹورنمنٹ ویمنز سنگلز کے فائنل میں رسائی حاصل کرلی ہے اور دونوں ہی کھلاڑیوں کے لئے اپنے کرئیر میں پہلی مرتبہ گرانڈ سلام خطاب حاصل کرنے کا سنہری موقع ہے اور کل کھیلے جانے والے فائنل میں ان کا خواب پورا ہوگا۔امریکہ میں رواں سال کے چوتھے اور آخری گرانڈ سلام میں ویمنز سنگلز ایونٹ کے سیمی فائنل میں امریکہ کی میڈیسن کیز نے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ہم وطن حریف کھلاڑی کوکو وانڈویج کو راست سٹس میں 6-1 اور 6-2 سے شکست دی۔دوسرے سیمی فائنل میں سلونی اسٹیفنز نے سابق چیمپیئن وینس ولیمز کو سنسنی خیز مقابلیمیں 6-1، 0-6 اور 7-5 سے شکست دی۔

TOPPOPULARRECENT