Tuesday , November 21 2017
Home / ہندوستان / نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ٹکنالوجی سرینگر میں کشیدگی حکومت خود مسئلہ حل کرے : عمر عبداللہ

نیشنل انسٹیٹیوٹ آف ٹکنالوجی سرینگر میں کشیدگی حکومت خود مسئلہ حل کرے : عمر عبداللہ

سرینگر ۔ 6 ۔ اپریل : ( سیاست ڈاٹ کام ) : سابق چیف منسٹر جموں و کشمیر عمر عبداللہ نے آج یہ خیال ظاہر کیا ہے کہ نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف ٹکنالوجی میں وزارت فروغ انسانی وسائل ٹیم کی آمد اور ریاستی پولیس کی جگہ سی آر پی ایف کی تعیناتی یہ اشارہ ملتا ہے کہ چیف منسٹر محبوبہ مفتی پر مرکز کو بھروسہ نہیں رہا ۔ نیشنل کانفرنس لیڈر نے کہا کہ اس مسئلہ کو حکمت سے حل کیا جانا چاہئے اور ریاستی حکومت دوسری کے اعانت حاصل کرنے سے گریز کرنا چاہئے ۔ عمر عبداللہ نے اپنے ٹوئٹر پر بتایا کہ این آئی ٹی میں کشیدہ صورتحال کی اطلاع پر ایچ آر ڈی ٹیم کی سی آر پی ایف دستہ کے ساتھ آمد سے ایسا معلوم ہوتا ہے کہ دہلی کو محبوبہ مفتی پر اعتماد نہیں ہے ۔ واضح رہے کہ این آئی ٹی سرینگر کیمپس میں گذشتہ ہفتہ ہندوستان کے خلاف ویسٹ انڈیز کی کامیابی پر طلباء گروپس میں تصادم کے بعد حالات کشیدہ ہوگئے تھے اور دوبارہ کل بھی غیر مقامی طلباء اپنی سلامتی پر اندیشے ظاہر کرتے ہوئے کیمپس سے جانے کی تیاری میں تھے کہ پولیس نے انہیں روکنے کی کوشش تھی اور لاٹھی چارج میں بعض طلباء زخمی ہوگئے ۔

TOPPOPULARRECENT