Wednesday , November 22 2017
Home / دنیا / نیوزی لینڈ مزید 100شامی پناہ گزینوں کو قبول کرنے آمادہ

نیوزی لینڈ مزید 100شامی پناہ گزینوں کو قبول کرنے آمادہ

فیڈریشن آف اسلامک اسوسی ایشنس نیوزی لینڈ کا اسلامی شعور بیدار ی ہفتہ

آکلینڈ۔13ستمبر ( سیاست مجیب کی رپورٹ ) وزیراعظم نیوزی لینڈ جان کی کے دفتر کے ترجمان ڈیم سوسن نے ٹی وی چینل ’’ دی نیشن ‘‘ کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ حکومت نیوزی لینڈ مزید 100شامی پناہ گزینوں کو قبول کرنے کیلئے آمادہ ہوگئی ہے ۔ نیوزی لینڈ کیلئے پناہ گزینوں کی موجودہ قابل قبول تعداد 750ہے ۔ تاہم اس سلسلہ میں قرارداد نیوزی لینڈ کی پارلیمنٹ میں ہنوز منظور نہیں ہوئی ہے ۔ لیبرپارٹی کے قائد اینڈرو لٹل پارلیمنٹ میں پناہ گزینوں کی تعداد کے بارے میں ایک قرار منظوری کیلئے پیش کررہے ہیں ۔ جب کہ اپوزیشن گرین پارٹی نے 100پناہ گزینوں کے اضافہ کو مایوس کن قرار دیتے ہوئے نیوزی لینڈ کی جانب سے سالانہ ایک ہزار پناہ گزینوں کو قبول کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔

وزیر امیگریشن مائیکل ووڈ ہاؤز نے اپنے بیان میں کہا کہ گذشتہ ڈھائی سال کے عرصہ میں پناہ گزینوں پر ایک تخمینہ کے بموجب 48.8 ملین امریکی ڈالر پہلے ہی خرچ کئے جاچکے ہیں ۔ 58ملین ڈالر قبل ازیں خرچ کئے گئے تھے ۔ نیوزی لینڈ پناہ گزینوں کے بحران کی یکسوئی کیلئے پہلے ہی 20ملین ڈالر بطور عطیہ دے چکا ہے ۔ عطیہ کی اس رقم سے نیوزی لینڈ کے وزیر مرے میک کلی کے بموجب ترکی میں پناہ گزینوں کیلئے اسکولس تعمیر کئے جائیں گے اور حفظان صحت کی سہولتیں فراہم کی جائیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ پناہ گزینوں کی مزید تعداد پر نظرثانی آئندہ سال یعنی 2016ء میں ممکن ہے ۔ انہوں نے تاہم کہا کہ نیوزی لینڈ کی اولین ترجیح شام میں خانہ جنگی کے خاتمہ کیلئے بین الاقوامی برادری کی جانب سے متفقہ کوشش اولین ترجیح ہوگی ۔

کیونکہ اسی طریقہ سے پناہ گزینوں کے اس بحران کی یکسوئی ممکن ہے ۔ دریں اثناء فیڈریشن آف اسلامک اسوسی ایشنس نیوزی لینڈ نے 7ستمبر سے 13ستمبر تک ’’ اسلام بیداری شعور ‘‘ ہفتہ منائے گا ۔ جس کا مقصد مسلمانوں اور غیر مسلموں کے درمیان خوشگوار تعلقات قائم کرنااور مذہب اسلام کے بارے میں موجود عام غلط فہمیاں دور کرنا تھا ۔ نیوزی لینڈ میں مسلمانوں کی آبادی 45ہزار ہے جن میں سے بیشتر نیوزی لینڈ میں پیدا ہوئے ہیں اور چار ہزار مسلمان نیوزی لینڈ کے حقیقی باشندوں ‘ مائوری  قبیلے سے تعلق رکھتے ہیں ۔ ویلنگٹن کے اسلامی مرکز میں چیف کمشنر انسانی حقوق کمیشن ڈیوڈ رودرفورڈ کے ہاتھوں اسلامی شعور کی بیداری پروگرام کا افتتاح عمل میں آیا ۔ 12ستمبر ہفتہ کو فرقہ وارانہ ہم آہنگی ایوارڈس پیش کئے گئے ۔

TOPPOPULARRECENT