Thursday , September 20 2018
Home / کھیل کی خبریں / نیوزی لینڈ کی انگلینڈ کے خلاف 19 سال بعد کامیابی

نیوزی لینڈ کی انگلینڈ کے خلاف 19 سال بعد کامیابی

کرائسٹ چرچ۔3 اپریل(سیاست ڈاٹ کام)لوورآرڈر میں ایش سوڈھی کے ناٹ آؤٹ 56 رن کی قیمتی اننگز کی بدولت نیوزی لینڈ نے دوسرے کرکٹ ٹسٹ کے پانچویں اور آخری دن میچ ڈرا کرانے کے ساتھ 19 سال بعد انگلینڈ کے خلاف ٹسٹ سیریز جیت لی جبکہ گھریلو میدان پر یہ اس کی 34 سال بعد ملی جیت ہے ۔نیوزی لینڈ کی سال 1999 کے بعد انگلینڈ کے خلاف یہ پہلی ٹسٹ سیریز جیت ہے جبکہ گھریلو میدان پر سال 1983-84کے بعد یہ اس کی پہلی ٹسٹ سیریز جیت ہے ۔میزبان ٹیم نے مہمان ٹیم کے خلاف پہلے ٹسٹ میں اننگز اور49 رنز سے جیت درج کی تھی اور دو ٹسٹ میچوں کی سیریز کو 1۔0 سے اپنے نام کیا۔دوسرے میچ میں382 رنز کے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے میچ کے آخری دن کے اختتام تک نیوزی لینڈ نے 124.4 اوور میں آٹھ وکٹ کے نقصان پر 256 رن بنائے ۔وہ کامیابی سے 126 رنز دورتھی کہ وقت ختم ہونے کے ساتھ میچ ڈرا ہوا۔میچ میں شکست ٹالنے کے ساتھ سیریز میں جیت یقینی بنانے کا سہرا آٹھویں نمبر کے سوڈھی کو جاتا ہے جنہوں نے ایک سرا سنبھالتے ہوئے 168 گیندوں کی اننگز میں نو چوکے لگا کر ناٹ آؤٹ 56 رنز کی اننگز کھیلی۔سوڈھی نے ساتویں نمبر کے کولن ڈی گرینڈھومے کے ساتھ ساتویں وکٹ کیلئے 57 رن جوڑے جبکہ نیل ویگنر (سات) کے ساتھ آٹھویں وکٹ کے لئے 37 رن جوڑے اور میدان پر آخر تک ٹکے رہے ۔گرینڈھومے نے97 گیندوں میں چھ چوکے لگا کر 45 رن بنائے ۔دوسرے ٹسٹ کے آخری دن نیوزی لینڈ نے صبح اپنی دوسری اننگز کا آغاز 42 رنز سے کیا تھا۔ بلے باز ٹام لاتھم 25 اور جیت راول 17 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ تھے اور گھریلو ٹیم کے تمام وکٹ محفوظ تھے ۔اگرچہ انگلینڈ کا آغاز بہترین رہا اور اس نے کل کے اسکور پر ہی اس کے دو وکٹ اکھاڑ دیئے ۔راول60 گیندوں میں دو چوکے لگا کر 17 رن پر ہی اسٹیورٹ براڈ کا شکار بن گئے تو کپتان کین ولیم ایک گیند ہی کھیل سکے اور بغیر کوئی رن بنائے براڈ کی اگلی ہی گیند پر جانی بیرسٹو کو کیچ دے بیٹھے ۔اوپنر لاتھم اگرچہ ایک سرا سنبھالکر کھیلتے رہے لیکن راس ٹیلر 13 رنز ہی بنا سکے ۔

TOPPOPULARRECENT