Wednesday , December 19 2018

نیوکلیئر ایندھن سے انکار پر ترقی یافتہ ممالک کی مذمت

نئی دہلی ۔6اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیراعظم نریندرم ودی نے آج ترقی یافتہ ممالک کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ ممالک ہندوستان کو ’’لکچر ‘‘ دیتے ہیں لیکن نیوکلیئرایندھن سے محروم رکھتے ہیں تاکہ صاف ستھری توانائی ہندوستان کو حاصل نہ ہوسکے ۔ انہوں نے تبدیلی ماحولیات کے خلاف جدوجہد سے ہندوستان کی وابستگی کے عہد کا اعادہ کیا ۔ انہوں نے کہا

نئی دہلی ۔6اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیراعظم نریندرم ودی نے آج ترقی یافتہ ممالک کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ ممالک ہندوستان کو ’’لکچر ‘‘ دیتے ہیں لیکن نیوکلیئرایندھن سے محروم رکھتے ہیں تاکہ صاف ستھری توانائی ہندوستان کو حاصل نہ ہوسکے ۔ انہوں نے تبدیلی ماحولیات کے خلاف جدوجہد سے ہندوستان کی وابستگی کے عہد کا اعادہ کیا ۔ انہوں نے کہا کہ یہ بھی عجیب اتفاق ہے کہ ماحولیات کے بارے میں دنیا ہندوستان کو لکچر دیتی ہے لیکن جب ہم انہیںکہتے ہیں کہ ہم نیوکلیئر توانائی حاصل کرنا چاہتے ہیں‘ کیونکہ یہ ماحولیات کے تحفظ کابہترین راستہ ہے اور جب ہم اُن سے نیوکلیئر توانائی کیلئے ضروری ایندھن فراہم کرنے کی خواہش کرتے ہیں تو وہ انکار کردیتے ہیں ۔ مودی نے اپوزیشن پارٹیوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن پارٹیاں ملک کو حصول اراضی قانون کے بارے میں گمراہ کررہی ہیں اور قبائلیوں اور جنگلاتی اراضی کے بارے میں کہہ رہی ہیں کہ اس مہم سے ملک کے مفادات کو نقصان پہنچے گا ۔ انہوں نے کہا کہ قبائلی اور جنگلاتی اراضی حصول اراضی قانون کے دائرہ کار میں شامل نہیں ہیں اس کا تحفظ علحدہ قوانین کے ذریعہ کیا گیا ہے ۔ حصول اراضی قانون کا اس سے کوئی تعلق ہی نہیں ہے ۔ اس میں قبائلی اور جنگلاتی اراضی کے بارے میں ایک لفظ بھی نہیں ہے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT