Wednesday , September 26 2018
Home / دنیا / نیویارک میںسیاہ فام امریکی ہلاکت پر احتجاج

نیویارک میںسیاہ فام امریکی ہلاکت پر احتجاج

لاس اینجیلس۔ 4 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) پولیس کی جانب سے ایک بے گھر شخص کو گولی مارکر ہلاک کرنے کی ویڈیو فوٹیج جب عام ہوئی اور لوگوں نے اسے دیکھا تو لاس اینجیلس کی سڑکیں احتجاجیوں سے بھر گئیں جہاں انہوں نے اس دلدوز واقعہ کے دو روز بعد مہلوک شخص کے لئے انصاف کا مطالبہ کیا۔ اطلاعات کے مطابق درجنوں احتجاجی لاس اینجلس پولیس ڈپارٹمنٹ (LAPD) کے ہی

لاس اینجیلس۔ 4 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) پولیس کی جانب سے ایک بے گھر شخص کو گولی مارکر ہلاک کرنے کی ویڈیو فوٹیج جب عام ہوئی اور لوگوں نے اسے دیکھا تو لاس اینجیلس کی سڑکیں احتجاجیوں سے بھر گئیں جہاں انہوں نے اس دلدوز واقعہ کے دو روز بعد مہلوک شخص کے لئے انصاف کا مطالبہ کیا۔ اطلاعات کے مطابق درجنوں احتجاجی لاس اینجلس پولیس ڈپارٹمنٹ (LAPD) کے ہیڈکوارٹرس کے باہر جمع ہوگئے جہاں انہوں نے پولیس کے ذریعہ اتوار کے روز کی گئی بہیمانہ حرکت پر شدید احتجاج کیا گیا جو دراصل سیاہ فام افریقی نژاد امریکی شہریوں کے قتل کرنے کے سلسلے کی ہی ایک کڑی ہے۔ اس موقع پر ’’لاس اینجیلس ٹائمس‘‘ نے بھی لا انفورسمنٹ ریکارڈس کے حوالے دیتے ہوئے مہلوک کی شناخت 39 سالہ چارلی سٹورمن روبنیٹ کی حیثیت سے ظاہر کی اور کہا کہ مہلوک 15 سال قبل مسلح ڈکیتی میں ملوث تھا اور اس نے سزائے قید بھی کاٹی تھی۔ چارلی کو پولیس نے شہر کے اسکڈ رو ہوم لیسی ڈسٹرکٹ میں کافی جدوجہد کے بعد ہلاک کیا جو مقامی طور پر ’’آفریقہ‘‘ کے نام سے جانا جاتا ہے۔ قبل ازیں چارلی کی شناخت ایک فرانسیسی شہری کی حیثیت سے کی گئی تھی تاہم پیرس میں موجود وزارت خارجہ نے اس کی تردید کی تھی۔

TOPPOPULARRECENT