Saturday , November 25 2017
Home / Top Stories / نیویارک کے مین ہٹن علاقہ میں بم دھماکہ ، 29 زخمی

نیویارک کے مین ہٹن علاقہ میں بم دھماکہ ، 29 زخمی

NEW YORK, SEP 18 :- Evidence markers are seen on the street around officials from the New York City Police Department (NYPD) and Federal Bureau of Investigation (FBI) near the site of an explosion in the Chelsea neighborhood of Manhattan, New York, U.S. September 18, 2016. REUTERS-20R

اقوام متحدہ جنرل اسمبلی سیشن سے عین قبل سنسنی خیز واقعہ ، دوسرے مقام سے پریشر کوکر اور تار دستیاب

نیویارک۔ 18 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) نیویارک کا پڑوسی علاقہ آج ایک طاقتور بم دھماکہ سے دہل گیا جس میں تقریباً 29 افراد زخمی ہوئے ہیں۔ اقوام متحدہ جنرل اسمبلی سیشن کیلئے عالمی قائدین یہاں جمع ہیں اور لہرانے اسے ایک دانستہ کارروائی قرار دیا ہے جبکہ پولیس نے قریبی مقام پر پریشر کوکر اور تار دستیاب ہوئے۔ یہ دھماکے کل مقامی وقت کے مطابق تقریباً 8:30 بجے شب نیوجرسی مین ہٹن کے 23 ویں سڑک اور چھٹے ایوینیو پر کچرے دان میں ہوا۔ اس رہائشی و تجارتی علاقہ میں سیاحوں اور مقامی افراد کی ہمیشہ چہل پہل رہتی ہیں۔ صدر امریکہ بارک اوباما اقوام متحدہ جنرل اسمبلی کے کل سے شروع ہورہے سیشن میں شرکت کی غرض سے یہاں پہنچنے والے تھے۔ وائیٹ ہاؤز کے عہدیداروں نے بتایا کہ اوباما کو بم دھماکے کی تفصیلات سے واقف کرا دیا گیا ہے۔نیویارک سٹی میئر بل ڈی بلیسیو نے کہا کہ زخمی ہونے والوں کی تعداد 29 ہے لیکن اس میں کسی کی بھی حالت نازک نہیں ہے، صرف ایک زخمی کی حالت نازک بتائی گئی ہے۔ میئر نے اس دھماکے کو دانستہ کارروائی قرار دیا لیکن کہا کہ فی الحال دہشت گردی سے تعلق کا کوئی ثبوت نہیں ملا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہر کو انتہائی سنگین صورتحال کا سامنا کرنا پڑا اور زخمی ہونے والوں کی تعداد قابل لحاظ ہے، تاہم فوری طور پر یہ نہیں کہا جاسکتا کہ اس حملے کا دہشت گردی سے کوئی تعلق ہوگا، کیونکہ فی الحال ایسا کوئی ثبوت نہیں ملا۔ انہوں نے اشارہ دیا کہ یہ ایک دانستہ حرکت ہوسکتی ہے۔ میئر نے کہا کہ فی الحال کسی مخصوص دہشت گرد تنظیم سے کوئی خطرہ لاحق نہیں ہے۔ یہ دھماکہ مصروف ترین اوقات میں ہوا جبکہ ہفتہ واری تعطیل کے دوران یہاں منہتھن کے بارس، ریسٹورنٹس اور لگژری اپارٹمنٹس میں عوام کی کثیر تعداد موجود ہوتی ہے۔ لوگ 9/11 کے پندرہ سال کی تکمیل کے بعد جاریہ ہفتہ یہاں واپس ہوئے تھے۔ حکام نے بتایا کہ علاقہ میں بڑے پیمانے پر تلاشی مہم جاری ہے، اور آس پاس کے علاقوں میں بھی تلاشی کا سلسلہ جاری رکھا گیا ہے، تاہم گیاس کے اخراج کو اس دھماکے کی وجہ قرار دینے سے انکار کیا ہے۔ شہر میں سکیورٹی پہلے ہی کافی سخت ہے کیونکہ  190 ممالک کے قائدین ایک ہفتہ طویل اقوام متحدہ جنرل اسمبلی سیشن کے سلسلے میں یہاں پہنچے ہیں۔ میئر نیویارک بیسیو نے مقامی دھماکہ پر پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مین ہٹن کے دوسرے مقام پر بھی تحقیقات جاری ہیں۔ مقامی عہدیداروں نے بتایا کہ چیلیسی میں چند قدم کے فاصلے پر جو آلات ملے ہیں ، ان میں پریشر کوکر اور گہرے رنگ کی وائرنگ وغیرہ شامل ہیں۔ یہ آلات ایک سلور کلر کے ٹیپ سے مربوط ہیں اور اسے پریشر کوکر کے باہر چھوٹے آلے کے ساتھ رکھا گیا تھا۔ مشتبہ آلہ چیلیسی میں ویسٹ 27 اسٹریٹ پر دستیاب ہوا جسے بعدازاں بم اسکواڈ نے بحفاظت ہٹا

TOPPOPULARRECENT