Saturday , November 18 2017
Home / Top Stories / ن27نئے اضلاع کی تشکیل سے اپوزیشن کا اتفاق ، کل مسودہ اعلامیہ کی اجرائی

ن27نئے اضلاع کی تشکیل سے اپوزیشن کا اتفاق ، کل مسودہ اعلامیہ کی اجرائی

مزید دو کل جماعتی اجلاسوں کی طلبی کا فیصلہ ، سندھو کو پانچ کروڑ روپئے کا انعام ، کابینی اجلاس کے بعد کے سی آر کی پریس کانفرنس

٭ نعیم کے زیر قبضہ اراضیات حقیقی مالکین کو واپس کی جائیں گی
٭ حکومت مہاراشٹرا سے سمجھوتہ کے لیے چیف منسٹر تلنگانہ کی پیر کو ممبئی روانگی
٭گینگسٹر کی حوصلہ افزائی کرنے والے ہی سی بی آئی تحقیقات کا مطالبہ کررہے ہیں
٭ جی ایس ٹی قانون کی توثیق کے لیے ستمبر کے پہلے ہفتہ میں اسمبلی کا خصوصی سیشن

حیدرآباد ۔ 20 ۔ اگست : ( سیاست نیوز) : چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں نے تلنگانہ میں اضلاع کی تعداد بڑھاکر 27 کرنے سے اتفاق کیا ہے ۔ 22 اگست کو نئے اضلاع کی تشکیل کے لیے مسودہ اعلامیہ جاری کردیا جائے گا ۔ رائے اور اعتراضات پیش کرنے کے لیے عوام کو ایک ماہ کی مہلت دی جائے گی ۔ دسہرہ سے نئے اضلاع کی تشکیل عمل میں آئے گی ۔ قطعی فیصلہ کرنے سے قبل ضرورت پڑنے پر مزید ایک یا دو کل جماعتی اجلاس طلب کیے جائیں گے ۔ اولمپکس میں سلور میڈل جیتنے والی سندھو کو 5 کروڑ روپئے نقد حیدرآباد میں ایک ہزار گز اراضی اور سندھو راضی ہونے پر سرکاری ملازمت دینے کا بھی اعلان کیا ۔ کابینہ اجلاس کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ ریاست میں مزید نئے 17 اضلاع تشکیل دیتے ہوئے جملہ اضلاع کی تعداد 27 کرنے کے لیے کابینی سب کمیٹی نے جو مسودہ تیار کیاتھا اس کو کابینہ اجلاس میں منظوری دے دی گئی ہے ۔ 22 اگست کو نئے اضلاع کی تشکیل کے لیے مسودہ اعلامیہ جاری کردیا جائے گا ۔ نظم و نسق کو عوام سے قریب کرنے کے لیے حکومت نے یہ فیصلہ کیا ہے جس کا تمام اپوزیشن جماعتوں نے بھی خیر مقدم کیا ہے ۔ چیف منسٹر نے کہا کہ عوام کا فیصلہ ہی قطعی ہوگا ۔ مسودہ اعلامیہ کی اجرائی کے بعد ایک ماہ تک عوام اپنی رائے اور اعتراضات کلکٹرس آفس اور سی سی ایل اے آفس میں تحریری طور پر پیش کرسکتے ہیں نئے اضلاع کی تشکیل کے لیے کئی مطالبات ہیں ۔ نظم و نسق کے لیے درکار تمام سہولتوں کو پیش کرتے ہوئے یہ مسودہ تیار کیا گیا ہے تاہم قطعی فیصلہ عوام کا ہی ہوگا ۔ نئے اضلاع کی تشکیل کا قطعی فیصلہ کرنے سے قبل ضرورت پڑنے پر مزید ایک یا دو کل جماعتی اجلاس طلب کیے جائیں گے ۔ دسہرہ کے موقع پر بطور ریونیو اضلاع کارکرد ہوجائیں گے ۔ ضلع ورنگل میں نئے اضلاع کی تشکیل کے بارے میں ہنوز الجھن باقی ہے ۔ زونل پوسٹ کو برخاست کرنے کی مرکز سے خواہش کی جائے گی ۔ صرف اسٹیٹ اور ڈسٹرکٹ سطح کے عہدے رہیں گے ۔ آئندہ پانچ سال تک آبکاری ڈپارٹمنٹ کو جوں کا توں رکھا جائے گا ۔ اضلاع سطح پر ضلع پریشد دوسرے منتخب نمائندے اپنی میعاد مکمل ہونے تک برقرار رہیں گے ۔ حکومت کے پاس اربن اور رورل منڈل تشکیل دینے کی تجویز زیر غور ہے ۔ 23 اگست کو حکومت مہاراشٹرا سے معاہدہ کرنے کے لیے وہ ممبئی جارہے ہیں مرکزی حکومت کی مداخلت کے بغیر دو ریاستوں میں طئے پانے والا یہ پہلا معاہدہ ہے ۔ دونوں ریاستوں پر مشتمل انٹر اسٹیٹ بورڈ نامی کمیٹی تشکیل دی جائے گی ۔ جس میں دونوں ریاستوں کے چیف منسٹرس ، چیف سکریٹریز اور دونوں ریاستوں کے پانچ پانچ وزراء اورمرکزی حکومت کا ایک نمائندہ بھی اس کمیٹی میں شامل رہے گا ۔ اولمپکس میں سلور میڈل حاصل کرنے والی سندھو کو مبارکباد دیتے ہوئے چیف منسٹر نے کہا کہ تلنگانہ کی بیٹی پر سارے ملک کو فخر ہے ۔ ملک کے لیے سلور میڈل حاصل کرنے والی سندھو کو ریاستی حکومت کی جانب سے 5 کروڑ روپئے نقد انعام حیدرآباد میں ایک ہزار گز اراضی دینے کے علاوہ اگر سندھو رضا مندی کا اظہار کرتی ہیں تو ایک سرکاری ملازمت بھی فراہم کی جائے گی اور کامیابی سے حیدرآباد لوٹنے والی سندھو کا بڑے پیمانے پر خیر مقدم کیا جائے گا ۔ اکیڈیمی کے ذریعہ اعلیٰ سطحی کھلاڑیاں تیار کرنے والے گوپی چند اکیڈیمی کو بھی ایک کروڑ روپئے نقد انعام ساتھ ہی ریسلر ساکشی ملک کو بھی ایک کروڑ روپئے نقد انعام دینے کا اعلان کیا ہے ۔ ستمبر کے پہلے ہفتے میں اسمبلی کا اجلاس طلب کرتے ہوئے جی ایس ٹی بل کو منظوری دینے کا اعلان کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہائی کورٹ کی تقسیم کے لیے وزیر اعظم نے انہیں بھروسہ دلایا ہے اور سپریم کورٹ کے چیف جسٹس نے بھی تیقن دیا ہے اس لیے وہ تھوڑا انتظار کررہے ہیں اگر مسئلہ حل نہ ہونے کی صورت میں وہ دہلی میں احتجاج کرنے سے بھی گریز نہیں کریں گے ۔ گینگسٹر نعیم کے بارے میں پوچھے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ وہ لا اینڈ آرڈر کے معاملے میں کوئی سمجھوتہ نہیں کرتے اور نہیں ہی کسی کو بخشتے ہیں اگر نعیم نے زبردستی عوام سے اراضیات چھین لی ہے تو وہ اراضیات متاثرین میں تقسیم کردیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ جو لوگ نعیم کی مجرمانہ سرگرمیوں میں حوصلہ افزائی کی ہے وہی لوگ اس واقعہ کی عدالتی اور سی بی آئی تحقیقات کرانے کا مطالبہ کررہے ہیں ۔ کانگریس کے پاور پوائنٹ پریزنٹیشن کو غیر سنجیدہ اقدام قرار دیتے ہوئے کہا کہ کانگریس احمقانہ انداز میں ترقیاتی کاموں کی مخالفت کررہی ہے ۔ ایک طویل منصوبہ بندی کے بعد ٹی آر ایس حکومت نے تلنگانہ کی ایک کروڑ اراضی کو پانی سیراب کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT