Thursday , June 21 2018
Home / اضلاع کی خبریں / وارنٹ کے تعلق سے سب انسپکٹر کوبیر کی وضاحت

وارنٹ کے تعلق سے سب انسپکٹر کوبیر کی وضاحت

کوبیر ۔ 20 ۔ نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) کوبیر سب انسپکٹر چندر نائیک بھگوا سے انٹرویو لیتے ہوئے نمائندہ سیاست کے یہ پوچھنے پر کہ وارنٹ کیوں جاری ہوا ۔ سب انسپکٹر نے انٹرویو میں وارنٹ کی اجرائی کے تعلق سے وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ حال ہی میں کچھ مہینے پہلے جام گاؤں کے قریب روڈ پر ٹو ویلیر ، فور ویلیرگاڑیوں کے انشورنس ، لائسنس ، آر سی ، پی

کوبیر ۔ 20 ۔ نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) کوبیر سب انسپکٹر چندر نائیک بھگوا سے انٹرویو لیتے ہوئے نمائندہ سیاست کے یہ پوچھنے پر کہ وارنٹ کیوں جاری ہوا ۔ سب انسپکٹر نے انٹرویو میں وارنٹ کی اجرائی کے تعلق سے وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ حال ہی میں کچھ مہینے پہلے جام گاؤں کے قریب روڈ پر ٹو ویلیر ، فور ویلیرگاڑیوں کے انشورنس ، لائسنس ، آر سی ، پیپرس چیکنگ کے دوران آر سی سی ، کنٹراکٹر سے پیپرس کے تعلق سے پوچھنے پر آر سی سی کنٹراکٹر پیپر پیش کرنے میں ناکام رہے اور ان کی موٹر سیکل کو ضبط کر کے کوبیر پولیس اسٹیشن میں رکھا گیا اور جرمانہ ادا کر کے موٹر سیکل کوبیر پولیس اسٹیشن سے حاصل کرنے کو کہا ۔ بعدازاں آر سی سی کنٹراکٹر نے دوسرے دن مجھ پر خانگی طور پر کیس (66/04) درج کیا ۔ اس دوران میں نے بھی ایک کیس (IPC) کے تحت کنٹراکٹر کے خلاف درج کیا ۔ کیس کے دوران مجھے پہلا نوٹس آنے پر اس دن ڈپارٹمنٹ کے کام سے عادل آباد گیا ہوا تھا ۔ دوسری نوٹس آنے پر چھٹی پر گاؤں گیا ہوا تھا ۔ تیسر ی نوٹس آنے پر بھینسہ گیا ہوا تھا جہاں مچھلی مارکٹ کے تنازعہ کو لیکر جگہ کے معائنہ کیلئے عادل آباد سے کلکٹر عادل آباد ایس پی آئے ہوئے تھے اور بھینسہ ڈی ایس پی نے کچھ گڑبڑ ہونے کے شک کی بنیاد پر مجھے بندوبست کیلئے بھینسہ بلایا تھا ۔ اسی دوران یہ تین بار عدالت میں حاضر نہ ہونے پر میرے خلاف وارنٹ جاری ہوا پھر اسی دن شام کے اوقات میں فرسٹ کلاس مجسٹریٹ کے روبرو حاضر ہوا ۔

TOPPOPULARRECENT