Tuesday , December 12 2017
Home / شہر کی خبریں / واچ مین ملازمت کیلئے ایم بی اے ، بی ٹیک کامیاب امیدواروں کی درخواستیں

واچ مین ملازمت کیلئے ایم بی اے ، بی ٹیک کامیاب امیدواروں کی درخواستیں

وشاکھاپٹنم ایسٹرن پاور ڈسٹری بیوشن کمپنی کے اعلامیہ کی اجرائی کے بعد درخواستوں کا انبار
حیدرآباد۔ 11 اکتوبر (سیاست نیوز) ملک اور ریاستوں میں بیروزگاری کا مسئلہ کس سطح تک پہونچ گیا ہے، اس کی ایک زندہ مثال یہ ہے کہ واچ مین کی جائیداد پر تقرر کیلئے ایم بی اے اور بی ٹیک کامیاب امیدواروں نے اپنی درخواستیں پیش کی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق واچ مین کی ملازمت کیلئے بی ٹیک اور ایم بی اے کامیاب بیروزگار، تعلیم یافتہ افراد نے درخواست پیش کرنے کا واقعہ وشاکھاپٹنم (آندھرا پردیش) میں پیش آیا، جبکہ ضلع وشاکھاپٹنم میں واقع ایسٹرن پاور ڈسٹریبیوشن کمپنی (اے پی ای پی ڈی سی ایل) نے واچ مین ملازمت کیلئے اعلامیہ جاری کیا اور اس اعلامیہ کی روشنی میں وصول درخواستوں میں کئی بی ٹیک اور ایم بی اے کامیاب بیروزگار تعلیم یافتہ افراد کی درخواستیں بھی شامل تھیں۔ ان درخواستوں کو دیکھنے کے بعد عہدیداروں کے سَر چکرا گئے۔ مذکورہ کمپنی میں 6 واچ مین کی جائیدادوں پر تقررات کیلئے اعلامیہ جاری کیا گیا اور اس اعلامیہ میں صرف اتنا کہا گیا تھا کہ تلگو زبان سے واقف 35 سال عمر رکھنے والے افراد واچ مین عہدے کیلئے درخواست دینے کے اہل ہوں گے۔ اس کے ساتھ ساتھ 25 ہزار ماہانہ تنخواہ دیئے جانے کا اظہار کیا گیا۔ اعلامیہ میں اس تنخواہ کا اظہار کرنا ہی تھا کہ ہزاروں کی تعداد میں درخواستیں وصول ہوئیں جن میں کئی بی ٹیک اور ایم بی اے کامیاب درخواست گذار بھی شامل تھے۔ اس صورتحال پر اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے مسٹر ایم ستیہ نارائنا اے پی ای پی ڈی سی ایل وشاکھاپٹنم سرکل عہدیدار نے بتایا کہ وصول شدہ درخواستوں میں بی ایس سی، بی کام، بی بی ایم، بی ٹیک، ایم بی اے کامیاب امیدواروں کی تعداد نصف سے زائد دیکھتے ہوئے انہیں تعجب ہوا جبکہ واچ مین کی جائیداد کیلئے کوئی تعلیمی قابلیت ہی لازمی نہیں ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ صورتحال دیکھنے کے بعد تمام عہدیدار حیرت زدہ ہوگئے، تاہم بعدازاں تمام درخواستوں کی جانچ کرتے ہوئے 2 ہزار سے زائد درخواستوں کے منجملہ صرف 317 امیدواروں کا انتخاب کرکے ان کو ٹسٹ کیلئے ہال ٹکٹس روانہ کئے گئے۔ انہوں نے کہا کہ ہال ٹکٹس کی وصولی کے بعد 148 امیدواروں نے دوڑنے کے ٹسٹ میں حصہ لیا۔ امیدواروں کے انتخاب کیلئے گزشتہ دن ہی 13 منٹ میں 2.5 کیلومیٹر کی دوڑ کا اہتمام کیا گیا جن میں 35 امیدوار مقررہ مدت میں اپنی دوڑ مکمل کرنے پر انہیں منتخب کیا گیا۔ مسٹر ستیہ نارائنا نے بتایا کہ ان 35 منتخب امیدواروں کا دیگر امتحان لیا جائے گا اور ان امتحان میں کامیاب امیدواروں کا تقرر کیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT