Monday , July 16 2018
Home / شہر کی خبریں / وجئے واڑہ میں کل اے پی حج ہاوز عمارت کا سنگ بنیاد

وجئے واڑہ میں کل اے پی حج ہاوز عمارت کا سنگ بنیاد

چیف منسٹر چندرا بابو کی شرکت ، محمد احمد شریف ایم ایل سی کا بیان
حیدرآباد ۔ 10 ۔ مئی : ( سیاست نیوز ) : چیف منسٹر آندھرا پردیش مسٹر این چندرا بابو نائیڈو 12 مئی کو وجئے واڑہ شہر میں واقع ودیادھر پورم ( آر ٹی سی ورکشاپ روڈ ) کے مقام پر مجوزہ نئی حج ہاوز عمارت کی تعمیر کے لیے سنگ بنیاد رکھیں گے ۔ اس مجوزہ حج ہاوز عمارت کی تعمیر کے لیے 70 تا 80 کروڑ روپئے کا تخمینہ کیا گیا ۔ جب کہ چندرا بابو نائیڈو نے اس مجوزہ عمارت کے لیے 35 کروڑ روپیوں کی منظوری دیتے ہوئے آندھرا پردیش وقف بورڈ کو جاری کرچکے ہیں ۔ جناب محمد احمد شریف رکن آندھرا پردیش قانون ساز کونسل نے یہ بات بتائی اور کہا کہ چیف منسٹر نے گذشتہ انتخابات کے موقعہ پر نئی ریاست آندھرا پردیش کے پیش نظر صبح وجئے واڑہ میں عالیشان پیمانہ کا حج ہاوز تعمیر کرنے کا وعدہ کیا تھا اور اپنے اس وعدے کو پورا کرنے کے لیے ہی وہ سنگ بنیاد رکھیں گے ۔ انہوں نے بتایا کہ سنگ بنیاد تقریب کے لیے تمام انتظامات تیزی کے ساتھ جاری ہیں اور تقریبا حد تک مکمل ہوچکے ہیں ۔ انہوں نے کہا چونکہ ریاست میں حج ہاوز عمارت نہیں ہے ۔ جس کی وجہ سے عازمین حج کو فریضہ حج کی ادائیگی پر روانہ ہونے کے لیے کافی مشکلات پیش آرہی تھیں اور ریاستی عازمین حج کو شہر حیدرآباد پہونچکر یا بنگلور پہونچکر روانہ ہونا پڑرہا تھا ۔ جس کو پیش نظر رکھتے ہوئے چندرا بابو نائیڈو نے ریاست کے عازمین حج کو درپیش ان مسائل و مشکلات سے راحت دلانے کے لیے اپنی نوعیت کا منفرد شاندار ڈیزائن پر مشتمل نئی حج ہاوز عمارت تعمیر کروانے کا فیصلہ کیا ۔تاکہ اس عمارت کی تکمیل کے ذریعہ ریاست آندھرا پردیش کے عازمین حج کو راست وجئے واڑہ سے فریضہ حج کی ادائیگی پر روانہ ہونے کے لیے مختلف سہولتیں فراہم ہوسکیں ۔ جناب احمد شریف نے مزید بتایا کہ مسٹر این چندرا بابو نائیڈو جب متحدہ ریاست آندھرا پردیش کے چیف منسٹر تھے ۔ اس وقت نامپلی پر واقع وقف اراضی پر نہ صرف عالیشان حج ہاوز عمارت تعمیر کروائی تھی بلکہ عازمین حج کے لیے حیدرآباد سے راست پروازوں کا بھی انتظام کروایا تھا ۔ ان راست پروازوں کا انتظام کرنے سے قبل متحدہ ریاست آندھرا پردیش کے عازمین حج کو ممبئی یا بنگلور پہونچکر فریضہ حج کی ادائیگی کے لیے روانہ ہونا پڑرہا تھا ۔ لیکن چیف منسٹر متحدہ آندھرا پردیش مسٹر این چندرا بابو نائیڈو نے مرکزی وزارت شہری ہوا بازی سے موثر نمائندگی کے ذریعہ حیدرآباد سے راست جدہ اور مدینہ منورہ کے لیے فلائٹس ( پروازوں ) کی سہولتوں کا انتظام کروایا تھا جس کے نتیجہ میں متحدہ ریاست آندھرا پردیش کے عازمین حج کو زبردست راحت حاصل ہوئی تھی ۔ رکن آندھرا پردیش قانون ساز کونسل نے بتایا کہ سال گذشتہ یعنی 2017 میں ریاست آندھرا پردیش سے 2870 عازمین حج نے فریضہ حج ادا کیا تھا اور جاریہ سال یعنی 2018 میں بھی ریاست آندھرا پردیش سے جملہ 2875 عازمین حج اپنے فریضہ حج کی ادائیگی کے لیے روانہ ہوں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT