Thursday , December 14 2017
Home / شہر کی خبریں / ورنگل لوک سبھا حلقہ سے مقابلہ کیلئے کانگریسی امیدواروں کے ناموں پر غور

ورنگل لوک سبھا حلقہ سے مقابلہ کیلئے کانگریسی امیدواروں کے ناموں پر غور

سروے ستیہ نارائنا ، دامودھر راج نرسمہا کے نام سرفہرست
حیدرآباد ۔ 3 ۔ اگست : ( سیاست نیوز ) : تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی حلقہ لوک سبھا ورنگل سے سابق مملکتی وزیر مسٹر سروے ستیہ نارائنا اور سابق ڈپٹی چیف منسٹر مسٹر دامودھر راج نرسمہا کو امیدوار بنانے پر سنجیدگی سے غور کررہی ہے ۔ جب کہ سابق رکن پارلیمنٹ مسٹر جی ویویک نے ضمنی انتخابات میں مقابلہ کرنے سے انکار کردیا ہے ۔ مسٹر کڈیم سری ہری نے ڈپٹی چیف منسٹر بن جانے کے بعد پارلیمنٹ کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا ہے ۔ جس کی وجہ سے ورنگل حلقہ لوک سبھا ( ایس سی ) کے لیے ضمنی انتخابات منعقد ہونے والے ہیں ۔ کانگریس پارٹی حکومت کے خلاف جاری لہر سے بھر پور فائدہ اٹھانے کی کوشش کررہی ہے ۔ ابتداء میں سابق اسپیکر میرا کمار کو بھی امیدوار بنانے پر غور کیا گیا جنہوں نے لوک سبھا میں تلنگانہ بل کو منظور کرانے میں اہم رول ادا کیا تھا ۔ کانگریس پارٹی ضمنی انتخابات میں طاقتور قائد کو امیدوار بناتے ہوئے پارلیمنٹ میں کانگریس کے ارکان کی تائید میں اضافہ کرنے کی حکمت عملی تیار کررہی ہے ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ کانگریس پارٹی مقابلہ کے لیے سابق ڈپٹی چیف منسٹر دامودھر راج نرسمہا اور سابق مرکزی وزیر مسٹر سروے ستیہ نارائنا کے نام پر بھی سنجیدگی سے غور کررہی ہے واضح رہے کہ مسٹر سروے ستیہ نارائنا نے کے سی آر کی جانب سے استعفیٰ دینے کے بعد مخلوعہ ہونے والی میدک لوک سبھا کے ضمنی انتخابات کے موقع پر ٹکٹ کے لیے اپنا دعویٰ پیش کیا تھا ۔ آنجہانی سینئیر کانگریس قائد مسٹر وینکٹ سوامی کے فرزند سابق رکن پارلیمنٹ مسٹر جی ویویک نے حلقہ لوک سبھا ضمنی انتخابات میں مقابلہ کرنے سے انکار کردیا ۔ انہوں نے کہا کہ وہ پارٹی صدر مسز سونیا گاندھی کا احترام کرتے ہیں تاہم پارٹی ہائی کمان مقابلہ کے لیے ہدایت بھی دیتی ہے تو مقابلہ نہیں کریں گے ۔

TOPPOPULARRECENT