Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / ورنگل پارلیمانی ضمنی انتخاب کیلئے کانگریس سے پانچ ناموں پر غور

ورنگل پارلیمانی ضمنی انتخاب کیلئے کانگریس سے پانچ ناموں پر غور

ڈگ وجئے سنگھ کو حیدرآباد میں قطعی فیصلہ کرنے کی ہدایت، اتم کمار کی راہول گاندھی سے ملاقات
حیدرآباد ۔ 29 ۔ اکٹوبر : ( سیاست نیوز): صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی نے دہلی میں کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی سے ملاقات کرتے ہوئے ورنگل لوک سبھا کے ضمنی انتخابات کے لیے 5 دعویداروں کے ناموں کی فہرست پیش کی ، راہول گاندھی نے دہلی میں فیصلہ کرنے کے بجائے ڈگ وجئے سنگھ کو حیدرآباد روانہ کرتے ہوئے پارٹی قائدین کے ساتھ پھر ایکبار مشاورت کرنے کی ہدایت دی ۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی نے کل دہلی میں راہول گاندھی سے ملاقات کی ۔ ورنگل ضمنی انتخابات پر تبادلہ خیال کرتے ہوئے ٹکٹ کے دعویداروں کے نام پیش کئے جس میں سابق رکن پارلیمنٹ مسٹر جی ویویک سابق مملکتی وزیر مسٹر سروے ستیہ نارائنا سابق رکن پارلیمنٹ ورنگل مسٹر راجیا کے علاوہ پرتاپ کے ناموں کو قطعیت دی گئی ہے ۔ حکمران ٹی آر ایس سے مقابلہ کے لیے مسٹر جی ویویک کو طاقتور امیدوار قرار دیا تاہم وہ مقابلہ کے لیے تیار نہیں ہے ۔ ہائی کمان کی جانب سے ان پر زور دینے کی اپیل کی گئی ۔ سروے ستیہ نارائنا کو دوسرے بڑے طاقتور امیدوار کے طور پر پیش کیا گیا ۔ راہول گاندھی نے حالات کا جائزہ لینے کے بعد مسٹر ڈگ وجئے سنگھ کو حیدرآباد پہونچ کر ضلع ورنگل کے کانگریس قائدین سے ملاقات کرتے ہوئے ان کی رائے حاصل کرنے پر زور دیا ہے ۔ کیپٹن اتم کمار ریڈی نے کہا کہ دیڑھ سال میں ٹی آر ایس حکومت عوام کے اعتماد سے محروم ہوگئی ہے ۔ ریاست میں زرعی شعبہ بحران کا شکار ہے ۔ 1200 سے زائد کسان خود کشی کرچکے ہیں ۔ ٹی آر ایس کے منشور میں کئے گئے ایک بھی وعدہ کو ابھی تک پورا نہیں کیا گیا ہے ۔ ڈبل بیڈ روم فلیٹ صرف تشہیر تک محدود ہے ۔ دلتوں کو تین ایکڑ اراضی نہیں دی گئی اور نہ ہی مسلمانوں سے کئے گئے 12 فیصد تحفظات کو پورا کیا گیا ہے ۔ جس سے تلنگانہ کے عوام میں ناراضگی ہے اور کانگریس پارٹی اپوزیشن کا تعمیری رول ادا کرنے میں کامیاب ہوئی ہے ۔ ورنگل کے ضمنی انتخاب میں کانگریس کا امیدوار ایک لاکھ ووٹوں کی اکثریت سے کامیاب ہوگا ۔۔

TOPPOPULARRECENT