Saturday , August 18 2018
Home / دنیا / وزیراعظم مودی فلپائن کے دورہ میں ذرائع ابلاغ پر چھا گئے

وزیراعظم مودی فلپائن کے دورہ میں ذرائع ابلاغ پر چھا گئے

l انٹرنیشنل رائس ریسرچ انسٹیٹیوٹ اور نقلی اعضاء
تیار کرنے والے مہاویر فاونڈیشن کا دورہ
l دہشت گردی سے نجات میں ہندوستان کی مدد
کیلئے فلپائن شکرگذار

منیلا، 13 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) وزیر اعظم نریندر مودی نے آج فلپائن کے دارالحکومت منیلا کے قریب لاس بانوس میں واقع بین الاقوامی رائس ریسرچ انسٹی ٹیوٹ (آئی آرآر آئی) کا دورہ کیا۔ یہ انسٹی ٹیوٹ اناج اور دھان کے بیجوں کی بہتر معیار تیار کرنے کی سمت میں کام کر رہا ہے ۔انہوں نے بعدازاں معذوروں کیلئے نقلی اعضاء تیار کرنے والے ایک ادارہ مہاویر فاؤنڈیشن کا بھی دورہ کیا جسے جے پورفٹ کہا جاتا ہے۔ وزیر اعظم کے دفتر کی جانب سے جاری ٹویٹ کی سیریز میں کہا گیا کہ آئی آر آر آئی میں کافی تعداد میں ہندوستانی سائنسداں کام کر رہے ہیں اور ان شعبوں میں تحقیق اور ترقی کے لئے اپنا تعاون دے رہے ہیں۔ایک اور ٹویٹ کے مطابق گزشتہ جولائی میں مرکز نے وارانسی میں آئی آر آر آئی کا جنوبی ایشیا علاقائی مرکز قائم کئے جانے کی تجویز کو منظوری دی تھی۔ فلپائن میں آئی آر آر آئی کے ہیڈ کوارٹر سے باہر یہ پہلا ریسرچ انسٹی ٹیوٹ ہوگا۔ اس مرکز کے ذریعے کسانوں کی آمدنی، چاول کی پیداوار میں اضافہ اور پیداواری لاگت میں کمی کے اقدامات کے ساتھ ہی کسانوں کی مہارت کے فروغ میں مدد ملے گی۔’مابو ہئے نریندر مودی‘،’پرائم منسٹر آف انڈیا‘ اور ’لانگ لیو پرائم منسٹر مودی‘ کی سرخیوں کے ساتھ وزیر اعظم نریندر مودی آج فلپائن کے اخباروں میں چھائے رہے ۔ایک اخبار نے عنوان لکھا-”فلپائن میں ہندوستانی انفارمیشن ٹکنالوجی اور بزنس پروسس مینجمنٹ انڈسٹری مسٹر مودی کا تہہ دل کے ساتھ استقبال کرتاہے ”۔ایک اخبار میں ایک صفحہ پر مشتمل اشتہار میں فیڈریشن آف انڈین چیمبرز آف کامرس آف فلپائن نے بھی مسٹر مودی کا استقبال کیا۔فیڈریشن نے اپنے مبارکبادی پیغام میں کہا -”ہندوستان اور فلپائن کی تاریخ کے اس خاص موقع پر وزیر اعظم کی یہاں آمدسے ہم اعزاز و فخر محسوس کررہے ہیں”۔فکی(فلپائن) کی جانب سے جاری ایک اشتہار میں کہا گیا-”ہمارا چیمبر فلپائن کے کاروباری شعبہ کو آگے بڑھانے میں قیادت کیلئے اہل ہے اور دونوں ممالک کے ساتھ مل کر کام کرنے کیلئے تیار ہیں۔ فلپائن کے صدر روڈ ریگو دتیرتے نے راجدھانی کے جنوبی شہر مراوی میں اسلامی ماوتے دہشت گرد گروپ کے ساتھ نبرد آزمائی میں مدد کے لئے ہندوستان سمیت آسیان کے اراکین اور دیگر بین الاقوامی شرکا کا شکریہ ادا کیا۔صدر فلپائن نے 31 ویں آسیان چوٹی کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں کہا کہ ہم اپنے بین الاقوامی شراکت داروں کے ممنون ہیں کہ وہ مراوی شہر کے حالات سے نمٹنے میں معاون رہے۔ یہ کانفرنس فلپائن کے کلچرل سنٹر میں ہورہی ہے ۔ ابھی ایک ماہ سے بھی کم وقفہ ہوا کہ فلپائنی حکومت نے فوجی کارروائی کے ذریعہ مراوی شہر کو داعش سے وابستگی رکھنے والے دہشت گردوں سے آزاد کرایا ۔ انہوں نے کہا کہ اب وہاں لوگوں کو پھر سے نئی زندگی شروع کرنے میں مدد کی جارہی ہے ۔داعش سے الحاق رکھنے والے دہشت گرد گروپوں سے نبرد آزمائی میں ہندوستان نے اسی سال جولائی میں فلپائن کو 3,2 کروڑ روپے کی امداد فراہم کی تھی۔ یہ امداد راحت رسانی اور باز آباد کاری کے لئے دی گئی تھی۔ یہ پہلا موقع تھا کہ ہندوستان نے خطرناک دہشت گردوں سے تحفظ کے لئے اس طرح کسی ملک کی مدد کی ہو۔

TOPPOPULARRECENT