وزیراعظم مودی کے گراموفون ریمارک پر راہول گاندھی کا جوابی وار

بار بار گاندھی خاندان کا تذکرہ ’ مسٹر 36 کے ویڈیو کا مزہ لیجئے‘ فیملی اور فرینڈس سے شیر کیجئے‘
نئی دہلی ۔ /9 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے صدر راہول گاندھی نے ان کا رکے ہوئے گرامو فون سے تقابل کرنے والے وزیراعظم نریندر مودی پر آج جوابی وار کیا ۔ انہوں نے وزیراعظم کا ایک ویڈیو پوسٹ کیا جس میں انہیں (مودی کو) متعدد تقاریر کے دوران گاندھی خاندان کے افراد کے بار بار حوالے دیتا ہوا دکھایا اور بتایا گیا ہے ۔ مودی نے اکٹوبر کے دوران بی جے پی قائدین سے ویڈیو کانفرنسنگ کے موقع پر یہ کہتے ہوئے راہول گاندھی کا مذاق اڑایا تھا کہ وہ ایک ایسے گراموفون کی طرح ہیں جس کی سوئی ایک ہی مقام پر اٹک گئی ہے اور ایک ہی بات کو بار بار دہراتے ہیں ۔ لیکن حکومت کے خلاف ان کے بچکانہ دعوؤں اور جھوٹ کو عوام قبول نہیں کریں گے ۔ کیونکہ وہ (عوام) اس قسم کے ریمارک کا مذاق اڑاتے ہیں لیکن راہول گاندھی نے بار بار گاندھیوں سے متعلق حوالوں پر مشتمل نریندر مودی کی متعدد تقاریر کا ایک ویڈیو پوسٹ کیا اس کے ساتھ یہ فقرہ ٹوئیٹ کیا کہ ’ یہ تفریحی ویڈیو مسٹر 36 کی طرف سے پیش کئے گئے ہیں ۔ امید ہے کہ آپ اس ویڈیو سے کافی لطف اندوز ہوں گے ۔ برائے مہربانی آپ بھی دیکھئے اور اس ویڈیو کو اپنے خاندان اور دوستوں کے ساتھ شیر کیجئے تاکہ وہ بھی محظوظ ہوسکیں ‘ ۔ یہ ویڈیو بی جے پی ورکروں سے نریندر مودی کی بات چیت سے شروع ہوا ہے ۔ جس میں وہ (مودی) یہ کہہ رہے ہیں کہ ’ پہلے گرامو فون ہوا کرتے تھے ۔ بعض اوقات وہ ایک ہی جگہ رک جاتے تھے اور بار بار ایک ہی لفظ دہرایا کرتے تھے ۔ ایسے بعض افراد بھی ہیں جب ان کے دماغ میں ایک بات آجاتی ہے تو وہ بار بار اس کو ہی دہرایا کرتے ہیں ۔ ‘بعد ازاں راہول گاندھی نے وزیراعظم مودی کی ایسی متعدد تقاریر پر مشتمل ایک ویڈیو پوسٹ کیا جس میں انہیں بار بار گاندھی خاندان کے حوالے دیتے ہوئے دکھایا گیا ہے ۔ وہ مختلف مقامات پر جواہر لعل نہرو ، اندرا گاندھی ، راجیو گاندھی ، سونیا گاندھی اور راہول گاندھی کے حوالے دے رہے تھے ۔

TOPPOPULARRECENT