Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / وزیر اعظم سے تحفظات کی تائید کا اعلان کروایا جائے، چندر شیکھر راؤ سے عبداللہ سہیل کا مطالبہ

وزیر اعظم سے تحفظات کی تائید کا اعلان کروایا جائے، چندر شیکھر راؤ سے عبداللہ سہیل کا مطالبہ

حیدرآباد۔/21نومبر، ( سیاست نیوز) صدر گریٹر حیدرآباد کانگریس اقلیت ڈپارٹمنٹ شیخ عبداللہ سہیل نے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ سے مطالبہ کیا کہ وہ وزیر اعظم نریندر مودی کے دورہ حیدرآبادکے موقع پر 12 فیصد مسلم تحفظات کی تائید میں اعلان کریں۔ آج ایک پریس نوٹ جاری کرتے ہوئے شیخ عبداللہ سہیل نے یاد دلایا کہ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر نے حالیہ اسمبلی سرمائی سیشن کے ذریعہ عوام کو پیغام پہنچایا کہ وزیر اعظم نریندر مودی 12 فیصد مسلم تحفظات کے حق میں ہیں۔ انہوں نے یہاں تک کہا کہ وزیر اعظم نے دہلی میں ایک ملاقات کے دوران 12فیصد مسلم تحفظات فراہم کا تیقن بھی دیا ہے۔ وزیر اعظم 28 نومبر کو عالمی بزنس کانفرنس میں شرکت کیلئے حیدرآباد پہنچ ریہ ہیں اس کا بھرپور فائدہ اٹھاتے ہوئے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کو چاہیئے کہ وزیر اعظم سے 12 فیصد مسلم تحفظات کا اعلان کرائیں اس سے چیف منسٹر اور وزیر اعظم کے درمیان جو نجی گفتگو ہوئی ہے اس کو برسر عام اعلان کردیا جائے۔ شیخ عبداللہ سہیل نے کہا کہ وہ 11نومبر کو تاریخی چارمینار سے 12 فیصد مسلم تحفظات کی ریالی منظم کرتے ہوئے 2 جون 2018 تک چیف منسٹر کو مسلمانوں سے کئے گئے وعدہ کی یاد دلانے کا اعلان کرچکے تھے جس پر وہ عمل کررہے ہیں۔ 19 اپریل 2014 کو شاد نگر میں ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کی سی آر نے اقتدار حاصل ہونے کے پہلے 4 ماہ میں مسلمانوں کو 12فیصد تحفظات فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا۔ 40 ماہ گذرنے کے باوجود اس وعدہ کو پورا نہیں کیا گیا۔ انہوں نے سپریم کورٹ کے تازہ احکامات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی بی جے پی کی جانب سے تین ریاستوں میں تحفظات کیلئے کئے گئے وعدہ کو پورا کرنے کیلئے دستور میں ترمیم نہیں کررہے ہیں۔ سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ کیا وہ مسلم تحفظات کیلئے ترمیم کریں گے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر 12 فیصد مسلم تحفظات پر عمل آوری کیلئے واضح روٹ میاپ کا اعلان کریں اور 2014کے عام انتخابات میں مسلم تحفظات میں توسیع دینے کا جو وعدہ کیا گیا تھا اس پر عمل کریں۔ حکومت کی جانب سے تاخیر کرنے پر تعلیم اور روزگار میں مسلمانوں کو 8فیصد کا نقصان ہورہا ہے۔ 2جون2008 تک کانگریس پارٹی چیف منسٹر کو 12 فیصد مسلم تحفظات کا وعدہ دلاتی رہے گی اور چار سال کی تکمیل کے بعد بڑے پیمانے پر احتجاجی مہم شروع کرے گی۔

TOPPOPULARRECENT