Monday , December 11 2017
Home / دنیا / وزیر دفاع امریکہ جیمس مٹیس کا دورہ ہند

وزیر دفاع امریکہ جیمس مٹیس کا دورہ ہند

باہمی دفاعی تعلقات میں اضافہ مقصد ‘ وزیر دفاع ‘ مشیر قومی سلامتی اور وزیراعظم سے ملاقاتیں مقرر

واشنگٹن۔24ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر دفاع امریکہ جیمس مٹیس ہند ۔امریکہ دفاعی تعلقات کو نئی سطح پر پہنچا دیں گے جب کہ وہ جاریہ ہفتہ ہندوستان کا دورہ کریں گے ۔ ایف ۔16طیاروں اور علاقائی صیانتی صورتحال بات چیت سرفہرست موضوعات ہوں گے ۔ ان کا پختہ نظریہ ہے کہ ایک طاقتور ہندوستان فوجی اور سفارتی دونوں اعتبار سے امریکہ کے قومی مفاد میں ہے۔ مٹیس وزیر دفاع ہندوستان نرملا سیتارامن ‘ مشیر قومی سلامتی اجیت کے ڈوول اور وزیراعظم نریندر مودی سے ملاقاتیں کریں گے ۔ یہ ہندوستان کا کابینی سطح کے کسی امریکی عہدیدار کا اولین دورہ ہوگا ۔ باخبر ذرائع کے بموجب ان کے دورہ کی تیاریاں شروع ہوچکی ہیں ۔ ان کے دورہ سے استفادہ کرتے ہوئے نیا صنعتی نظام قائم کیا جائے گا تاکہ ہند ۔ امریکہ دفاعی تعلقات میں اضافہ کیا جاسکے ۔ اس سے دونوں ممالک کے درمیان دفاعی تعاون برائے افغانستان میں اضافہ ہوگا اور بحری صیانت مستحکم ہوگی ۔ قانون کی حکمرانی ایشیائے کوچک کے علاقہ میں بحال کی جائے گی ۔ کوئی نمایاں دفاعی تجارتی معاہدہ وزیردفاع امریکہ مٹیس کے 26تا 27ستمبر دورہ کے موقع پر ہونے کے امکان کا اعلان بھی کیا گیا ہے ۔ ذرائع کے بموجب دونوں تجویزوں یعنی ایف۔16 اور ایف ۔18A طیاروں کی فروخت پر مودی کی ’’ میڈ ان انڈیا ‘‘ مہم کے تحت غور کیا جائے گا ۔علاوہ ازیں ان امکانات کی بھی نشاندہی کی جائے گی جس کے ذریعہ پُرعزم دفاعی ٹکنالوجی اور تجارتی اقدامات کئے جاسکتے ہیں ۔ ٹرمپ انتظامیہ چاہتا ہے کہ ایف۔18 اور ایف ۔16 لڑاکا طیارے ہندوستان کو فروخت کرے جو امریکی کمپنیوں بوئنگ اور لاک کیڈ مارٹن کے علی الترتیب تیار کردے ہیں ۔ دونوں کمپنیوں نے ان طیاروں کو ہندوستان میں جوڑنے کی پیشکش بھی کی ہے ۔ ان کے دورہ سے قبل مٹیس ہندوستان کے سفیر برائے امریکہ نوتیج سرنا سے پنٹگان میں ملاقات کرچکے ہیں ۔ یہ ایک انتہائی نایاب خیرسگالی اشارہ تھا کہ مٹیس نے پنٹگان میں دریا کی سمت سے داخلہ کے مقام تک جاکر ان کا استقبال کیا ۔ ہندوستان کے سفیر نے کہا کہ دونوں کی ملاقات انتہائی مثبت اور خوشگوار ماحول میں ہوئی ۔

TOPPOPULARRECENT