Monday , June 25 2018
Home / شہر کی خبریں / وشاکھا پٹنم میں طوفان سے متاثرہ مساجد کی آج کی تعمیر و مرمت کا آغاز

وشاکھا پٹنم میں طوفان سے متاثرہ مساجد کی آج کی تعمیر و مرمت کا آغاز

جمعیتہ علماء ٹیم کا دورہ ، صدر جمعیتہ علماء مولانا حافظ پیر شبیر احمد کا بیان

جمعیتہ علماء ٹیم کا دورہ ، صدر جمعیتہ علماء مولانا حافظ پیر شبیر احمد کا بیان
حیدرآباد ۔ 24 اکٹوبر ۔ ( سیاست نیوز)جمعیۃ علمائے ہند آندھراپردیش کی جانب سے طوفان سے متاثرہ علاقوں کی مساجد کی فوری طورپر تعمیر کا فیصلہ کیا گیاہے ۔ صدر جمعیۃ علماء آندھراپردیش مولانا حافظ پیر شبیر احمد نے بتایا کہ وشاکھاپٹنم کے علاقہ میں تاحال طوفان ہُد ہُد کے باعث چار مساجد کو کافی زیادہ نقصان پہونچنے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ ان اطلاعات کے موصول ہوتے ہی جمعیۃ علماء نے مقامی ذمہ داران کی نگرانی میں تفصیلات سے آ گہی حاصل کی اور دو یوم قبل حافظ محمد خلیق احمد صابر جنرل سکریٹری جمعیۃ علمائے ہند آندھراپردیش و تلنگانہ کو ہُد ہُد سے متاثرہ علاقوں کے دورہ کیلئے روانہ کیا ۔ مولانا حافظ خلیق احمد صابر نے بتایا کہ تاحال تین مساجد کی فوری تعمیر کا 25 اکٹوبر سے آغاز کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اور ان مساجد کی تعمیر جدید کی مکمل ذمہ داری جمعیۃ علمائے ہند آندھراپردیش نے لے رکھی ہے ۔ انھوں نے مزید بتایا کہ اسٹیڈیم کے قریب واقع 120 مکانات پر مشتمل مسلم بستی مکمل طورپر تباہ ہوچکی ہے اور اس علاقہ کے مکینوں کی فوری بازآبادکاری ناگزیر ہے ۔ انھوں نے بتایا کہ مقامی ذمہ داران کے ہمراہ دورہ کے بعد اس بات کا فیصلہ کیا گیا ہے کہ اس بستی کی بازآبادکاری کیلئے جمعیۃ کی جانب سے دیگر معاونین کے تعاون سے اقدامات کئے جائیں گے ۔ حافظ خلیق احمد صابر نے بتایا کہ جن تین مساجد کی تعمیر جدید کی ذمہ داری جمعیۃ علمائے ہند آندھراپردیش نے لے رکھی ہے اُن میں مدینہ مسجد ، مسجد ابراہیم کے علاوہ ایک اور مسجد شامل ہے جبکہ جامع مسجد کے نام سے مشہور مسجد اسحق شاہ مدنی رحمۃ اﷲ علیہ کی تعمیر آندھراپردیش ریاستی وقف بورڈ کی اعانت سے کروانے کا مقامی عوام نے فیصلہ کیا ہے ۔ مولانا حافظ پیر شبیر احمد صدر جمعیۃ علماء نے بتایا کہ درگاہ اسحق شاہ مدنی ؒ کے تحت کروڑہا روپئے کی اوقافی جائیدادیں موجود ہیں اور جامع مسجد اسحق شاہ مدنی بھی اسی جائیداد پر تعمیر کی گئی ہے ، اسی لئے جمعیۃ نے فیصلہ کیا ہے کہ اس مسجد کی تعمیر کے سلسلے میں آندھراپردیش ریاستی وقف بورڈ کی توجہ مبذول کرواتے ہوئے نمائندگی کی جائے ۔ انھوں نے مزید بتایا کہ جمعیۃ علمائے ہند آندھراپردیش کی جانب سے ہُد ہُد طوفان کے متاثرین کی بازآبادکاری و امداد رسانی کا عمل جاری ہے ۔ حافظ پیر شبیر احمد نے کہا کہ اسٹیڈیم کے قریب جن 120 مکانات کے متاثر ہونے کی تفصیلات موصول ہوئی ہیں اُن کی ازسرنو تعمیر کے علاوہ متاثرہ خاندانوں کو فوری طورپر امداد کی فراہمی کے سلسلے میں حافظ خلیق احمد صابر وشاکھاپٹنم میں قیام کئے ہوئے ہے اور آئندہ چند یوم کے دوران 120 مکانات کے متاثرین کو امداد کی فراہمی کے متعلق قطعی اعلان کیا جائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT