وظائف کے سروے میں پائی جانے والی کوتاہیوں کو ختم کرنے کی یقین دہانی

سلیم نگر میں آسرا اسکیم کا آغاز، ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ جناب محمد محمود علی کا خطاب

سلیم نگر میں آسرا اسکیم کا آغاز، ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ جناب محمد محمود علی کا خطاب

حیدرآباد۔9نومبر(سیاست نیوز) نائب وزیر اعلی تلنگانہ ریاست الحاج محمد محمو دعلی نے ریاست کے معاشی طور پر پسماندہ خاندانوں کی امداد کے لئے حکومت کو سنجیدہ قراردیتے ہوئے کہاکہ چیف منسٹر مسٹر کے چندرشیکھر رائو کی خصوصی دلچسپی کی وجہہ سے بیوائوں اور ضعیفوں وظائف میں اضافہ کیاگیا تاکہ وہ حکومت کی مدد سے خوشحالی زندگی گذارسکیں۔ آج یہاں سلیم نگر کمیونٹی ہال میں آسرا پنشن اسکیم کے تحت وظائف کی تقسیم کے دوران انہوں نے وظائف کے متعلق کئے جانے والے سروے کی کوتاہیو ںکو دور کرنے کا بھی یقین دلایا اور کہاکہ تلنگانہ حکومت کے اندر کسی بھی مستحق اور غریب کو اس کے حق سے محروم نہیںکیا جائے گا۔ الحاج محمد محمود علی نے مزیدکہاکہ ریاست تلنگانہ کے صدر مقام ہونے کے باوجود شہر حیدرآباد کا بڑا حصہ بالخصوص پرانا شہر بنیادی سہولتوں سے محروم رہا ہے ۔ پرانے شہر کو نئے شہر کے طرز پر ترقی دینے کے لئے یہاں پر سرکاری دفاتر کا قیام عمل میںلایا جائے گا ۔ انہوں نے پرانے شہر کی ترقی کے لئے علیحدہ فنڈز کی اجرائی کے ذریعہ یہاں پر آئی ٹی سیکٹر قائم کرنے اور پرانے شہر کے نوجوانوں کو روزگار سے لگانے کا بھی اس موقع پر اعلان کیا۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے کہاکہ پرانے شہر میںاب تک ایک بھی پاسپورٹ آفس کاونٹر قائم نہیںکیاگیا اور ناہی موثر اندازمیںبنیادی سہولتیں فراہم کرنے والے اداروں کو پرانے شہر میں قیام عمل میں لایا گیا ۔انہوں نے سابق کی تمام روایتوں کو ختم کرتے ہوئے پرانے شہر کی ترقی کو مثالی بنانے کا عوام سے وعدہ کیا۔ انہوں نے کہاکہ حکومت تلنگانہ کی جانب سے 30 کروڑ کا بجٹ وظائف کے لئے جاری کئے گئے ہیںجس کو مکمل خرچ کیا جائے گا اور کسی بھی مستحق کو حکومت کی آسرا پنشن اسکیم سے محروم نہیں رہنے دیا جائے گااور امید ہے کہ آگے بھی حکومت اور عوام کے درمیان متعلقہ عملے رابطے کی کڑی کاکام کریگا۔ اس موقع پر آر ڈی او حیدرآباد شریمتی نیکھیلا‘ متعلقہ ایم آر او نیلیما کے علاوہ ٹی آر ایس انچار ج اسمبلی حلقہ ملک پیٹ محمد اعظم علی خرم‘ سلیم نگر کارپوریٹر سرینواس‘ جی ایچ ایم سی فلور لیڈر تلگودیشم سنگی ریڈی سرینواس ریڈی‘ ڈپٹی فلور لیڈر سہادیو کے علاوہ دیگر لوگ بھی موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT