Sunday , November 19 2017
Home / شہر کی خبریں / وقف جائیدادوں پر قبضے اور حکومت خاموش تماشائی

وقف جائیدادوں پر قبضے اور حکومت خاموش تماشائی

کانگریس کا کونسل سے واک آؤٹ۔ ’’ہم وعدے کے پابند ہیں‘‘ : محمود علی

حیدرآباد۔ 17 مارچ (سیاست نیوز) وقف جائیدادوں کی تباہی ناجائز قبضے اور فروختگی کے مسئلہ پر کونسل میں ڈپٹی چیف منسٹر مسٹر محمد محمود علی اور قائد اپوزیشن محمد علی شبیر کے درمیان تیکھی بحث و تکرار ہوگئی۔ حکومت کے جواب سے عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کانگریس نے واک آؤٹ کیا۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے کانگریس کے دور حکومت میں وقف جائیدادوں کو نقصان پہونچنے کا دعویٰ کیا۔ قائد اپوزیشن نے اپنے گھر کے قریب واقع چیونٹی شاہ مسجد کی وقف اراضی پر پٹہ جات جاری کرنے تک تماشہ دیکھنے کا الزام عائد کیا۔ تلنگانہ قانون ساز کونسل میں وقفہ سوالات کے دوران کانگریس کے رکن قانون ساز کونسل مسٹر محمد فاروق حسین نے کہا کہ وقف جائیدادوں پر برسوں سے ناجائز قبضے ہیں۔ وقف جائیدادوں پر سرکاری آفس قائم ہیں اور ان کی جانب سے وقف بورڈ کو کرایہ بھی ادا نہیں کیا جارہا ہے۔ سابق ایوان کمیٹیوں کی جانب سے پیش کردہ سفارشات پر آج تک عمل آوری نہیں ہوئی ہے۔ جھوٹ کا سہارا لیتے ہوئے حکومت ایوان کو گمراہ کررہی ہے۔ٹی آر ایس نے اپنے انتخابی منشور میں وقف جائیدادوں کا تحفظ کرنے اور ناجائز قبضوں کا شکار وقف اراضیات پر سے قبضہ برخاست کرتے ہوئے وقف بورڈ کے حوالے کرنے کا وعدہ کیا تھا، جس پر آج تک عمل آوری نہیں ہوئی ہے۔ اس کا جواب دیتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر مسٹر محمد محمود علی نے کہا کہ وقف جائیداد کا تحفظ کرنے کے معاملے میں ٹی آر ایس حکومت عہد کی پابند ہے۔ وقف بورڈ میں عملے کی کمی ہے۔ چیف منسٹر کے سی آر نے وقف بورڈ میں 80 تا 100 ملازمین کے تقررات کیلئے احکامات جاری کردیئے ہیں۔ وقف بورڈ کے ایمپلائیز کی جانب سے کام میں کوتاہی کا اعتراف کرتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر نے کہا کہ چیف منسٹر اقلیتی بہبود مسائل پر خصوصی دلچسپی لے رہے ہیں۔ کرایوں میں اضافہ کرنے کیلئے کرایہ داروں سے مشاورت کی جارہی ہے۔ سابق ایوان کی کمیٹیوں نے 84 سفارشات کی ہیں جس پر عمل آوری کیلئے ایک نیا قانون بنانے کی ضرورت ہے۔

بزنس جیٹ طیارے کی خریداری
سے ہندوستانی صارفین کی دلچسپی
حیدرآباد۔ 17 مارچ (این ایس ایس) ایمبریر ایگزیکٹیو جیٹس نے ہندوستان میں صارفین سے بزنس جیٹ فینوم 100E کا آرڈر موصول ہونے کا اعلان کیا۔ ٹائٹن ایوئیشین گروپ کا ہیڈکوارٹر یو اے ای میں ہے۔ فینوم 100Eکی مختصر رن وے پر بھی لینڈنگ اور پرواز کی جاسکتی ہے۔ اس کے علاوہ یہ کفایتی بھی ہیں۔ مینیجنگ ڈائریکٹر گروپ کیپٹن شاکر شیخ نے بتایا کہ ہندوستان میں اس طیارے کے جملہ آرڈرس کی تعداد 22 ہوگئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT