Saturday , November 25 2017
Home / اضلاع کی خبریں / ونپرتی میں سڑکوں کی توسیع کا عنقریب آغاز

ونپرتی میں سڑکوں کی توسیع کا عنقریب آغاز

ونپرتی 25 مارچ (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ونپرتی میں عرصہ دراز سے رکا ہوا سڑکوں کے توسیع کے کاموں کا عنقریب آغاز ہونے پر ایم ایل اے ونپرتی ڈاکٹر جی چناریڈی نے اُمید ظاہر کی۔ آج اپنی رہائش گاہ میں نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہاکہ جاریہ اسمبلی اجلاس میں اس مسئلہ کو متعلقہ وزیر سے سوال کرنے پر انھوں نے کہاکہ ونپرتی سڑکوں کی توسیع کا عمل عنقریب شروع ہوگا۔ اس سے قبل ماسٹر پلان میں تبدیلی کرنے متعلقہ محکمہ کو ایک ہفتہ کے اندر جی او جاری کرنے کا انھوں نے تیقن دیا۔ انھوں نے کہاکہ محکمہ آر اینڈ بی نے ونپرتی میں سڑکوں کی توسیع کے لئے حکومت کو 204 کروڑ کا تخمینہ روانہ کیا ہے جس میں ونپرتی کے پالی ٹیکنک کالج سے 3 کیلو میٹر کیلئے 32 کروڑ، کوتہ کوٹہ روڈ تا ناگورم تانڈہ تک چار کیلو میٹر کیلئے 42 کروڑ ، ونپرتی سے بجناپلی سڑک کے لئے 4-2 کیلو میٹر کے لئے ڈگری کالج تک 50 کروڑ، پانگل روڈ چار کیلو میٹر کیلئے 40 کروڑ ، گھن پور روڈ کے لئے 40 کروڑ روپئے شامل ہیں۔ انھوں نے کہاکہ عنقریب ہونے والے کرشنا پشکرالو کے تحت پئبیر منڈل میں تین بڑے گھاٹ اور پانچ چھوٹے گھاٹوں کی تعمیر کے لئے 15 کروڑ 80 لاکھ روپئے منظور ہوئے ہیں۔ یہ کام پنچایت راج کے تحت ہوں گے۔ انھوں نے کہاکہ رائچور تا کلواکرتی سڑک کو نیشنل ہائی وے میں شامل کیا گیا جس میں گدوال، کوتہ کوٹہ، ونپرتی، ناگر کرنول، کلواکرتی شامل ہیں۔ جملہ 143 کیلو میٹر پر سڑک رہے گی۔ انھوں نے کہاکہ ونپرتی اریا ہاسپٹل کو ایک کروڑ روپئے منظور ہوئے ہیں جس میں 70 لاکھ روپیوں سے تمام آلات خریدے جائیں گے۔ جو ہاسپٹل میں ضرورت ہے۔ باقی 30 لاکھ تعمیری کام میں خرچ کیا جائے گا۔ اس موقع پر ونپرتی ایم پی پی شنکر نائیک، کوآپشن ممبر بابو میاں، کانگریس پارٹی ونپرتی منڈل صدر ترپتیا، شام کمار، عبداللہ، چندرا مولی کے علاوہ دیگر موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT