Friday , October 19 2018
Home / شہر کی خبریں / ووٹر لسٹ میں بے قاعدگیوں کا جائزہ لینے کی سماعت 31 اکٹوبر تک ملتوی

ووٹر لسٹ میں بے قاعدگیوں کا جائزہ لینے کی سماعت 31 اکٹوبر تک ملتوی

حیدرآباد /12 اکٹوبر ( سیاست نیوز ) حیدرآباد ہائی کورٹ نے ووٹر لسٹ میں بے قاعدگیاں ہونے کی درخواست کا جائزہ لینے کے بعد آئندہ سماعت 31 اکٹوبر تک ملتوی کردیا ۔ کانگریس کے قائد ایم ششی دھر ریڈی نے ہائی کورٹ کے فیصلے کا خیرمقدم کیا ہے ۔ ہائی کورٹ نے آج فہرست رائے دہندگان کی کے تعلق سے داخل کردہ درخواست کا جائزہ لیا ۔ آئندہ سماعت 31 اکٹوبر تک ملتوی کردی تاہم الیکشن کمیشن کو ہدایت دی گئی ہے کہ حلف نامہ میں بوتھ لیول سطح پر جو ووٹر لسٹ عدالت کو پیش کیا گیا ہے ۔ اسی کو برقرار رکھیں ۔ بعد ازاں گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کانگریس کے قائد ایم ششی دھر ریڈی نے ہائی کورٹ کے فیصلے کا خیرمقدم کیا اور کہا کہ پرچہ نامزدگی داخل کرنے کے آخری دن ووٹر لسٹ میں ناموں کے اندراج کے عمل کی نگرانی کرنے کا ہائی کورٹ نے فیصلہ کیا ہے ۔ کانگریس پارٹی 31 اکٹوبر کو پھر ایک بار اپنے موقف سے ہائی کورٹ کو واقف کرائے گی ۔ کانگریس پارٹی کو عدلیہ پر مکمل بھروسہ ہے ۔ ششی دھر ریڈی نے کہا کہ ایک کارگذار وزیر نے انتخابات سے ڈر کر کانگریس پرعدلیہ کا سہارا لینے کا الزام عائد کیا ہے جبکہ حقیقت یہ ہے کہ کانگریس پارٹی نے ووٹر لسٹ میں جو بے قاعدگیاں ہوئی ہیں اس کو درست کرانے کیلئے عدلیہ کا دروازہ کھٹکٹھایا ہے ۔
حکومت کو راحت ، اسمبلی تحلیل کرنے کے خلاف درخواست ہائی کورٹ میں مسترد
حیدرآباد /12 اکٹوبر ( سیاست نیوز ) حیدرآباد ہائی کورٹ نے تلنگانہ اسمبلی تحلیل کرنے کے معاملے میں کارگذار ٹی آر ایس حکومت کو راحت فراہم کی ہے ۔ کانگریس قائدین ڈی کے ارونا اور شیشانک ریڈی کی جانب سے 9 ماہ قبل اسمبلی تحلیل کرنے کے خلاف دائر کردہ درخواست کو آج ہائی کورٹ نے خارج کردیا ۔ درخواست گذاروں کی جانب سے 9 ماہ قبل اسمبلی کی تحلیل کو دستور کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے فیصلے کو عدلیہ میں چیالنج کیا تھا ۔ الیکشن کمیشن کے وکیل نے سماعت کے دوران بحث کرتے ہوئے بتایا کہ اسمبلی تحلیل ہونے کے اندرون 6 ماہ تازہ انتخابات کرانے کی سپریم کورٹ نے رولنگ دی ہے ۔ جس کے تناظر میں الیکشن کمیشن انتخابات کرانے کی تیاریاں تقریباً مکمل کرچکا ہے ۔ اس سلسلے میں ووٹر لسٹ بھی جاری کردی گئی ہے ۔ اگر کوئی اعتراضات ہیں تو پرچہ نامزدگی داخل کرنے کے آخری دن 3 بجے تک قبول کئے جائیں گے ۔
تمام دلائل سننے کے بعد ہائی کورٹ نے کہا کہ ووٹر لسٹ میں ناموں کے اندراج کی ہائی کورٹ نگرانی کرے گی ۔ ہائی کورٹ کی جانب سے درخواست کو خارج کردئے جانے کے بعد تلنگانہ میں انتخابات کرانے کی راہ ہموار ہوگئی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT