Tuesday , December 12 2017
Home / کھیل کی خبریں / ویسٹ انڈیز ٹسٹ سیریز میں سست پچس کی توقع

ویسٹ انڈیز ٹسٹ سیریز میں سست پچس کی توقع

کوشش کرنا فاسٹ بولرس کا کام ۔ بہت کچھ سیکھنے کی کوشش ۔ نوجوان بولر شردل ٹھاکر کا بیان
باسوٹیرے ( سنٹ کٹس ) 17 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) ہندوستان کے فاسٹ بولر شردل ٹھاکر حالانکہ ویسٹ انڈیز کے حالات سے زیادہ واقفیت نہیں رکھتے لیکن انہوںنے اس خیال کا اظہار کیا کہ ویسٹ انڈیز کے خلاف 21 جولائی سے شروع ہونے والی ٹسٹ سیریز میں بھی وکٹیں سست رفتار ہوسکتی ہیں جیسی کہ اب تک کھیلے گئے دو پریکٹس میچس میںتھی ۔ ہندوستان کا دوسرا پریکٹس میچ بھی ڈرا پر ختم ہوا جب ویسٹ انڈیز بورڈ پریسیڈنٹ الیون نے اپنی دو اننگز میں 226/6 اور 180 رنز بنائے تھے جبکہ ہندوستان اپنی واحد اننگز میں 364 رنوں پر آوٹ ہوگیا تھا ۔ شردل ٹھاکر نے پریکٹس میچ کے اختتام کے بعد کہا کہ انہوں نے سینئرس کے ساتھ ایک بولنگ یونٹ کی طرح بیٹھ کر مشاورت کی ہے ۔ ہم نے پچ کے تعلق سے تمام پہلووں اور حالات پر غور کیا ہے ۔ دونوںہی پریکٹس میچس کیلئے پچس سست رفتار رہی تھیں اور ہمیں امید ہے کہ ٹسٹ سیریز میں بھی اسی نوعیت کی پچس ہونگی ۔ انہوں نے کہا کہ ایسے حالات میں بولرس کو اپنے طور پر کوششیں کرتی رہنی ہونگی ۔ وکٹ جتنی سست رفتار ہوگی اتنی ہی زیادہ کوشش کرنی ہوگی ۔کوشش کرنا ان کا کام ہے اور یہی میچس میں ضروری ہوتا ہے ۔ اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ پچ کیسی ہے ۔ ایک فاسٹ بولر کو ہر گیند پر اپنی کوشش دہرانی پڑتی ہے ۔ نوجوان شردل ٹھاکر کو 17 رکنی ٹیم میں شامل کیا گیا ہے جبکہ انہوں نے رانجی ٹرافی میں ممبئی کیلئے بہترین مظاہرہ کیا تھا ۔ انہوں نے سنٹ کٹس میں بھی اچھا مظاہرہ کیا تھا اور دونوں ہی اننگز میں اپنی بولنگ سے بلے بازوں کو پریشان کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ ہمیشہ سے ان کا خواب رہا کہ ٹسٹ ٹیم میںجگہ بنائیں۔ جس جگہ دوسرے بولرس کو کچھ تجربہ حاصل ہو آپ کو بہت کچھ سیکھنے کو ملتا ہے ۔ وہ بھی جتنا ممکن ہوسکے سیکھنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ممکنہ حد تک دوسروں سے سیکھنا ان کیلئے مستقبل میں کیرئیر کو بہتر بنانے میں معاون ہوسکتا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT