Tuesday , December 12 2017
Home / ہندوستان / وی کے سنگھ پر مبینہ نشانہ بنانے اور ہراسانی کے الزامات

وی کے سنگھ پر مبینہ نشانہ بنانے اور ہراسانی کے الزامات

فوجی سربراہ دلبیر سنگھ کا بیان، ترقی سے محروم کرنے کی کوشش
نئی دہلی ۔ 18 اگست (سیاست ڈاٹ کام) برسرخدمت فوجی سربراہ نے اپنے پیشروؤں پر شدید تنقید کرکے ایک غیرمعمولی قدم اٹھاتے ہوئے جنرل دلبیر سنگھ نے الزام عائد کیا کہ انہیں اس وقت کے جنرل ریٹائرڈ وی کے سنگھ نے مبینہ نشانہ بنایا اور ہراساں کرتے ہوئے انہیں ترقی سے روک دیا تھا۔ وی کے سنگھ اب مرکزی وزیر بنے ہوئے ہیں۔ ان کی ہراسانی اور نشانہ بنانے کا اول مقصد انہیں فوجی کمانڈر کی حیثیت سے ترقی دینے سے روکنا تھا۔ جنرل دلبیر سنگھ نے اپنی ذاتی پریشانیوں کے بارے میں داخل کردہ ایک حلفنامہ میں الزام عائد کیا اور لیفٹننٹ جنرل ریٹائرڈ اروی دستانے کی داخل کردہ درخواست کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ فوجی کمانڈر ی حیثیت سے ان کے انتخاب کے دوران مبینہ طور پر ’’طرفداری‘‘ کی گئی تھی۔ جنرل دلبیر سنگھ نے کہا کہ مجھے اس وقت کے فوجی جنرل نے نشانہ بنایا تھا۔ ان کا اصل مقصد مجھے ترقی سے روکنا تھا۔ انہوں نے ان الزامات کو مسترد کردیا کہ انہوں نے اپنے طور پر کسی کی ترقی کو روکنے کی کوشش کی ہے۔ مجھ پر عائد کردہ الزامات جھوٹے اور بے بنیاد ہیں۔ یہ خیالی الزامات ہیں جس میں کئی خامیاں پائی جاتی ہیں۔ میرے خلاف ایسا کوئی ثبوت نہیں ہے کہ میں نے کسی کو ترقی سے روکا تھا۔ میرے خلاف وجہ بتاؤ نوٹس جاری کی گئی ہے جو ایک منظم سازش کا حصہ ہے۔

TOPPOPULARRECENT