Thursday , December 14 2017
Home / Top Stories / ٹاملناڈو میں سونیا اور راہول گاندھی کی انتخابی مہم

ٹاملناڈو میں سونیا اور راہول گاندھی کی انتخابی مہم

کوئمبتور 3 مئی (سیاست ڈاٹ کام) صدر کانگریس سونیا گاندھی، صدر ڈی ایم کے ایم کروناندھی کے ساتھ 5 مئی کو ایک ہی شہ نشین پر موجود ہوں گی جہاں وہ کانگریسی امیدواروں کی تائید میں انتخابی مہم چلائیں گی۔ جبکہ نائب صدر پارٹی راہول گاندھی انتخابی جلسوں کو 3 شہروں میں 7 مئی کو مخاطب کریں گے تاکہ ڈی ایم کے ۔ کانگریس اتحاد کے امیدواروں کے لئے رائے دہندوں کی تائید حاصل کی جاسکے۔ سونیا گاندھی چینائی میں 5 مئی کو صدر ڈی ایم کے ایم کروناندھی کے ساتھ ایک ہی شہ نشین پر موجود ہوں گی۔ اِس کی اطلاع ایک پریس کانفرنس میں صدر پردیش کانگریس الانگوون نے دی ہے۔ نئی دہلی سے موصولہ اطلاع کے بموجب نائب صدر کانگریس راہول گاندھی نے ایک سوال کے جواب میں کہاکہ اُن پر تنقید سے اُنھیں خوشی حاصل ہوتی ہے۔ اُن سے بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ کرٹ سومیا کے انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ کو ہیلی کاپٹر اسکام کے بارے میں مکتوب تحریر کرتے ہوئے اُن پر الزام عائد کرنے کے بارے میں سوال کیا گیا تھا۔

سونیا گاندھی کی سینئر پارٹی قائدین سے مشاورت
متنازعہ ہیلی کاپٹر معاملت کے مسئلہ پر جامع حکمت عملی کا فیصلہ
نئی دہلی 3 مئی ( سیاست ڈا کام ) چونکہ کل چہارشنبہ کو آگسٹا ویسٹ لینڈ ہیلی کاپٹر مسئلہ راجیہ سبھا میں مباحث کا موضوع ہوگا ایسے میں کانگریس کی صدر سونیا گاندھی نے آج سینئر قائدین کے ساتھ اجلاس میںاس کا جائزہ لیا ۔ سونیا کی پارٹی قائدین سے یہ مشاورت اہمیت کی حامل ہوگئی ہے کیونکہ بی جے پی لیڈر سبرامنین سوامی نے سونیا گاندھی کا نام بھی اس مسئلہ میں گھسیٹا ہے اور اس پر کانگریس ارکان نے شدید احتجاج کیا تھا ۔ پارٹی کے کچھ قائدین چاہتے تھے کہ اس مسئلہ پر جامع حکمت عملی اختیار کی جائے تاکہ یہ پیام دیا جاسکے کہ پارٹی اس مسئلہ پر مکمل مباحث کے حق میں ہے تاہم ساتھ ہی یہ بھی پیام دیاجائے کہ پارٹی قیادت کوا س میں گھسیٹنے پر خاموشی اختیار نہیںکی جائیگی ۔ اے آئی سی سی کی پریس کانفرنس میں پارٹی ترجمان جیوتر آدتیہ سندھیا نے کہا کہ پارٹی چاہتی ہے کہ اس مسئلہ پر پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں مباحث ہوںتاکہ اس پر سب کچھ واضح ہوجائے ۔ لوک سبھا میں بھی کانگریس نے اس مسئلہ پر مختصر مباحث کی نوٹس دی ہے اور تحریک توجہ دہانی بھی پیش کی ہے ۔ اشارہ ملا ہے کہ اطالوی میرینس کے مسئلہ کو بھی پارٹی موضوع بنا کر نریندر مودی حکومت کو سخت تنقید کا نشانہ بنائیگی ۔

TOPPOPULARRECENT