Wednesday , December 12 2018

ٹرائی بل کو عام آدمی پارٹی کی مخالفت

نئی دہلی 11 جولائی (سیاست ڈاٹ کام )عام آدمی پارٹی نے آج کہا کہ وہ لوک سبھا میں ٹرائی قانون میں ترمیم کے بل کی مخالفت کرے گی ۔ یہ بل سابق صدر نشین ٹرائی کی پرنسپال سکریٹری برائے وزیر اعظم نریندر مودی کے تقرر میں حائل قانونی رکاوٹ دور کرنے کیلئے پیش کیا جارہا ہے ۔ عام آدمی پارٹی کے ایک سینئر قائدین نے کہا کہ پارٹی اس اقدام کی مخالفت کرے گ

نئی دہلی 11 جولائی (سیاست ڈاٹ کام )عام آدمی پارٹی نے آج کہا کہ وہ لوک سبھا میں ٹرائی قانون میں ترمیم کے بل کی مخالفت کرے گی ۔ یہ بل سابق صدر نشین ٹرائی کی پرنسپال سکریٹری برائے وزیر اعظم نریندر مودی کے تقرر میں حائل قانونی رکاوٹ دور کرنے کیلئے پیش کیا جارہا ہے ۔ عام آدمی پارٹی کے ایک سینئر قائدین نے کہا کہ پارٹی اس اقدام کی مخالفت کرے گی کیونکہ یہ ٹیلی کام نگران کار محکمہ کی غیر جانبداری ’’تباہ ‘‘کردے گا ۔ قبل ازیں اس سلسلہ میں ایک آر ڈیننس جاری کیا گیا تھا جو غیر اخلاقی تھا۔ ٹرائی بل جو آر ڈیننس کی جگہ لے گا ایوان میں آج دوپہر شور و غل کے دوران پیش کردیا گیا ۔ بی جے پی نے اپنے ارکان کو ایک وہپ جاری کرتے ہوئے بل کی تائید کرنے کی ہدایت دی تھی ۔ آرڈیننس کی تدوین سے پہلے ٹیلی کام ریگولیٹری اتھاریٹی آف انڈیا (ٹرائی) ایکٹ کے تحت اس کے صدر نشین اور ارکان کو مرکزی یا ریاستی حکومت میں عہدہ سے سبکدوشی کے بعد کوئی بھی عہدہ قبول کرنے پر امتناع عائد تھا۔

TOPPOPULARRECENT