Sunday , November 18 2018
Home / دنیا / ٹرمپ کے ووٹرس سے ہلاری کلنٹن کو نفرت

ٹرمپ کے ووٹرس سے ہلاری کلنٹن کو نفرت

ممبئی میں سابق صدارتی امیدوار کے ریمارکس پر وائیٹ ہاؤز کی تنقید
واشنگٹن ۔ 16 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) وائیٹ ہاؤز نے آج کہا کہ امریکی سابق وزیرخارجہ کو 2016ء کے صدارتی انتخابات میں شکست ہوگئی تھی۔ فاتح امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ کے حق میں ووٹ دینے والے امریکیوں سے بغض و نفرت ہے۔ وہائیٹ ہاؤز کی پریس سکریٹری سارہ سینڈرس نے سابق ڈیموکریٹک صدارتی امیدوار کی طرف سے ممبئی میں ’’انڈیا ٹوڈے کانکلیو‘‘ میں کئے ان ریمارکس کی مذمت کی، جن میں انہوں نے انتخابی شکست کیلئے امریکہ کے پسماندہ علاقوں کو موردالزام ٹھہرایا تھا۔ سارہ سینڈرس نے روزمرہ کی پریس کانفرنس سے خطاب کے دوران کہا کہ ’’میرے خیال میں یہ بالکل صحیح اور واضح مثال ہے کہ ہلاری کلنٹن وائیٹ ہاؤز میں کیوں نہیں ہیں‘‘۔ سینڈرس نے کہا کہ ’’وہ (کلنٹن) ہمیشہ ہی امریکی عوام سے مکمل طور پر غیرمربوط ہوچکی تھیں اور یقینا میں سمجھتی ہوں کہ انہوں نے ان لاکھوں امریکیوں کے تئیں نفرت کا مظاہرہ کیا ہے جو باہر آئے اور ووٹ دیا تھا اور صدر ٹرمپ کی تائید کی تھی اور آج بھی تائید کررہے ہیں‘‘۔ ہلاری کلنٹن نے کہا تھا کہ ’’اگر آپ امریکہ کا نقشہ دیکھیں گے تو وسط میں جو تمام سرخ نظر آرہا ہے وہاں سے ٹرمپ کامیاب ہوئے تھے میں نے ساحلوں سے کامیابی حاصل کی تھی، میں ایلینائے سے کامیاب ہوئی تھی، میں منی سوٹا سے جیتی تھی اور ایسے ہی مقامات سے جیت چکی تھی‘‘۔ انہوں نے کہا تھا کہ ’’ٹرمپ پسماندہ علاقوں سے منتخب ہوئے تھے‘‘۔ ہلاری کلنٹن کے ان تبصروں پر مختلف گوشوں سے تنقیدیں کی گئی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT