Monday , December 11 2017
Home / جرائم و حادثات / ٹماٹو ساس تیار ساز کمپنی پر پولیس کا دھاوا

ٹماٹو ساس تیار ساز کمپنی پر پولیس کا دھاوا

ایک شخص گرفتار، مضر صحت اشیاء ضبط
حیدرآباد۔/21ستمبر، ( سیاست نیوز) انسانی صحت کے لئے خطرناک ثابت ہونے والے غیر تغذیہ بخش و ناقص ٹماٹو ساس تیار کرنے والے ایک شخص کو اسپیشل آپریشن ٹیم نے گرفتار کرلیا اور کارخانہ کو بند کردیا۔ تاہم اس کارخانہ کا اصل مالک مفرور بتایا گیا ہے جو گرفتار شدہ شخص کا والد ہے۔باپ بیٹا جو ریاست بہار سے تعلق رکھتے ہیں یہاں شہر میں خطرناک غذائی اشیاء تیار کررہے تھے۔ راچہ کنڈہ پولیس کمشنر مسٹر مہیش مرلیدھر بھگوت کی خصوصی ہدایت پر ایس او ٹی ملکاجگری زون نے کارروائی انجام دی۔ ایس او ٹی کے مطابق میڑپلی پولیس حدود میں پولیس نے بڑے پیمانے پر کارروائی کرتے ہوئے گودام اور کارخانہ کومہربند کردیا جوماں گائتری فوڈ انٹر پرائززبوڈ اوپل میں کارخانہ چلارہے تھے۔ پولیس نے 24سالہ بھگوان سنگھ کو گرفتار کرلیا جو بوڈ اوپل میں رہتا تھا۔ گرفتار شخص کا والد سوامی ناتھ سنگھ جو مفرور بتایا گیا ہے دونوں ریاست بہار کے متوطن بتائے گئے ہیں اور انہوں نے شہر منتقل ہوکر بوڈاوپل کے علاقہ میں سکونت اختیارکی تھی۔ ان باپ بیٹے نے ایک مکان کرایہ پر حاصل کیا اور ٹماٹو ساس کا رخانہ باضابطہ طور پر چلارہے تھے۔ ان کے پاس کسی بھی سرکاری ایجنسی یا پھر ادارہ کا کوئی اجازت نامہ نہیں تھا اور یہ لوگ قطعی طور پر فوڈ سیفٹی اسٹینڈرڈ اتھاریٹی آف انڈیا (FSSAI) کی خلاف ورزی کررہے تھے اور اپنے کارخانہ میں تیار کردہ ٹماٹو ساس کو انتہائی خطرناک انداز میں پیاک کرتے ہوئے کم داموں میں فاسٹ فوڈ سنٹروں اور ہوٹلوں میں سپلائی کررہے تھے جو انسانی صحت کیلئے مضر ثابت ہورہا ہے ۔ ایس او ٹی مزید تحقیقات کررہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT