Monday , December 18 2017
Home / شہر کی خبریں / ٹولی چوکی میں سرکاری بجٹ کا بے جا خرچ ، سڑکوں کی کھدائی سے عوام عاجز

ٹولی چوکی میں سرکاری بجٹ کا بے جا خرچ ، سڑکوں کی کھدائی سے عوام عاجز

عوام کیا چاہتے ہیں
ٹولی چوکی میں سرکاری بجٹ کا بے جا خرچ ، سڑکوں کی کھدائی سے عوام عاجز
بار بار پائپ لائنوں کی تبدیلی ، بنیادی سہولتیں ندارد ، عوام مستقل سہولت چاہتے ہیں
حیدرآباد 17 ستمبر (سیاست نیوز) پرانے شہر سے نئے شہر کی طرف منتقل ہونے کے لئے ٹولی چوکی کا رُخ کرنے والے شہریوں کو برسوں گزر جانے کے باوجود اب بھی کوئی خاطر خواہ راحت میسر نہیں آئی بلکہ ٹولی چوکی کے بیشتر علاقوں کے عوام آج بھی بنیادی مسائل کے حل کیلئے پریشان ہیں۔ چونکہ آج بھی اِن علاقوں سے نہ پانی کی نکاسی کا بہتر انتظام ہے اور نہ ہی اِن علاقوں میں پائپ لائن کی درستگی کے لئے کوئی اقدامات کئے گئے ہیں۔ جس کی وجہ سے علاقہ کے عوام میں کافی ناراضگی پائی جاتی ہے۔ ٹولی چوکی کے کئی علاقوں میں سڑکوں کی کھدائی اور بار بار پائپ لائن کی تبدیلی وغیرہ کے عمل سے عاجز شہریوں نے اس بات کی شکایت کی ہے کہ علاقہ کو ترقی دینے کے نام پر سرکاری بجٹ خرچ تو کیا جارہا ہے لیکن اب تک بھی کئی مسائل جوں کے توں برقرار ہیں۔ برسہا برس سے اس علاقہ میں عوام بارش کے پانی کی عدم نکاسی کے سبب مشکلات کا سامنا کررہے ہیں اور ہر بار انتخابات کے وقت اس بات کا وعدہ کیا جاتا ہے کہ اس مسئلہ کو عاجلانہ طور پر حل کرنے کے اقدامات کئے جائیں گے لیکن ہر بار یہ اعلان سیاسی وعدہ اور انتخابی حربہ ثابت ہوتا آرہا ہے۔ گزشتہ عام انتخابات سے قبل بلدی انتخابات کے وقت بھی اس بات کا اعلان کیا گیا تھا کہ ٹولی چوکی کے کسی بھی مقام پر بارش کا پانی جمع نہیں ہوگا اور نکاسی کے لئے بہتر انتظامات یقینی بنائے جائیں گے لیکن ایسا نہیں ہوا اور عام انتخابات آگئے اور ان انتخابات سے قبل بھی عوام کو اطمینان دلاتے ہوئے یہ کہا گیا کہ بارش کے پانی کی نکاسی کے اقدامات کا آغاز ہوچکا ہے اور متعلقہ قائدین نے پانی کی نکاسی کے کاموں کا افتتاح بھی انجام دیدیا ہے لیکن اب بھی عوام ان مسائل کو برداشت کرنے پر مجبور ہیں۔ اتنا ہی نہیں بارش کے پانی کی نکاسی کا نامناسب انتظام صورتحال کو مزید ابتر کچھ یوں کررہا ہے کہ یہ جمع پانی محکمہ آبرسانی کی پائپ لائن میں داخل ہوتے ہوئے پینے کے پانی کو آلودہ کرتا جارہا ہے اور عوام نہ صرف ماحولیاتی آلودگی کا شکار ہورہے ہیں بلکہ آبی آلودگی کے سبب بھی مختلف بیماریوں سے پریشان ہیں۔ اسی طرح علاقہ میں مچھروں کی کثرت بھی عوام کے لئے انتہا سے زیادہ تکلیف دہ ہے چونکہ ٹولی چوکی کی بیشتر گلیوں میں رات کے اوقات میں بات کرنا بھی محال ہوتا ہے جس کی وجہ گلی کوچوں میں اسٹریٹ لائٹس کا نہ ہونا ہے۔ اگر محکمہ بلدیہ برقی و آبرسانی کی جانب سے اس علاقہ میں بہتر سہولتوں کی فراہمی یقینی بنائی جاتی ہے تو اقلیتی غالب آبادی والے اس علاقہ کی اہمیت میں مزید اضافہ ہوسکتا ہے۔ ٹولی چوکی کے عوام چاہتے ہیں کہ فوری طور پر پانی کی نکاسی کے انتظامات کو بہتر بنایا جائے اور علاقہ کے تمام گلی کوچوں میں اسٹریٹ لائٹس کی تنصیب عمل میں لائی جائے تاکہ علاقہ کے عوام کو درپیش مسائل فوری حل ہوسکیں۔

TOPPOPULARRECENT