Sunday , December 17 2017
Home / جرائم و حادثات / ٹول گیٹ اسٹاف پر رکن پارلیمنٹ کے بیٹے کا حملہ

ٹول گیٹ اسٹاف پر رکن پارلیمنٹ کے بیٹے کا حملہ

فرنیچر تباہ ‘ کمپیوٹرس کو نقصان ‘ ٹول فیس طلب کرنے پر برہمی
اننت پور۔24اپریل ( این ایس ایس ) آندھراپردیش میں رکن پارلیمنٹ کے فرزند نے مبینہ طور پر ایک گروپ کی قیادت کرتے ہوئے ٹول پلازا کو حملہ کا نشانہ بنایا اور توڑپھوڑ مچائی ۔ یہ واقعہ باگے پلی میں واقع ٹول گیٹ پر پیش آیا جہاں تلگودیشم رکن پارلیمنٹ این کشٹپا کے بیٹے امبریش کی کار کو چنگی اصولی کیلئے روکا گیا تو انہوں نے ٹول گیٹ پلازہ کو ہی نشانہ بنایا اور یہاں موجود آلات کو نقصان پہنچایا ۔ امبریش کرناٹک کی طرف جارہے تھے کہ ٹول گیٹ اسٹاف نے ان سے چارجس طلب کئے ۔ انہوں نے برہمی کا اظہار کیا اور اپنے حامیوں کے ساتھ کار سے باہر نکل کر کیبن کے شیشے اور کمپیوٹرس توڑ دیئے ۔ انہوں نے کہا کہ وہ ٹول فیس کا تقاضہ نہیں کرسکتے ۔ امبریش نے اسٹاف پر بھی حملہ کیا اور ایک مرحلہ پر انہوں نے چلاتے ہوئے کہا کہ ’’ ایک رکن پارلیمنٹ کے بیٹے کو ٹول فیس کیلئے روکنے کی تمہیں ہمت کیسے ہوئی ‘‘ ۔ اسٹاف خوف کے عالم میں یہاں سے فرار ہوگیا ۔ بعدازاں امبریش نے باگے پلی پولیس اسٹیشن پہنچ کر ٹول گیٹ اسٹاف کیلئے شکایت درج کرائی ۔ واضح رہے کہ اسی ٹول گیٹ پر کچھ عرصہ پہلے اسی مسئلہ پر رکن پارلیمنٹ کشٹپا کی بھی اسٹاف کے ساتھ جھڑپ ہوئی تھی ۔ اس دوران چیف منسٹر این چندرا بابو نائیڈو نے میڈیا میں نشر کئے جانے والے سی سی ٹی وی فٹیج دیکھنے کے بعد واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیا ہے ۔ انہوں نے اس واقعہ کے بارے میں رکن پارلیمنٹ کشٹپا سے بھی بات کی اور سمجھا جاتا ہے کہ انہوں نے امبریش کے رویہ پر ناراضگی کا اظہار کیا ۔

TOPPOPULARRECENT